ام عمارہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

صحابیہ ۔ نسیبہ نام ۔ ام عمارہ کنیت ۔ قبیلہ خزرج کے خاندان نجار سے تھیں۔ پہلا نکاح زید بن عاصم سے ہوا۔ پھر عبہ بن عمر کے نکاح میں آگئیں اور ان کے ساتھ بیعت عقبہ میں شرکت کی جس میں 73 مرد اور صرف دو عورتیں تھیں۔ غزوہ احد میں شریک ہوئیں‌۔ کاندھے پر ایک زخم کھایا۔ احد کے بعد بیعت رضوان غزوہ خیبر اور فتح مکہ میں شرکت کی ۔ حضرت ابوبکر کے عہد خلافت میں یمامہ کی جنگ میں اپنے ایک لڑکے کو (حبیب) کو لے کر شریک ہوئیں اور جب مسیلمہ کذاب نے ان کے لڑکے کو شہید کردیا تو انھوں نے منت مانی کہ یا مسیلمہ قتل ہوگا یا وہ خود جان دے دیں‌گی ۔ یہ کہہ کر تلوار کھینچ لی اور میدان جنگ میں کود پڑیں۔ 12 زخم کھائے اور ایک ہاتھ کٹ گیا۔ اس جنگ میں مسیلمہ ماراگیا۔