سودہ بنت زمعہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
مؤمنین کی والدہ
امہات المؤمنین - (ازواج مطہرات)

امہات المومنین

ام المؤمنین حضرت سودہ بنت زمعہ رضی اللہ عنہا ازواج مطہرات میں سے ایک ہیں۔

ابتدائی معلومات

حضرت سودہ قریش کے ایک قبیلے عامر بن لومی سے تعلق رکھتی تھیں۔

ہجرت حبشہ

حضرت وہ پہلی خاتون تھیں جنہوں نے اپنے پہلے خاوند سکران بن عمرو کے ساتھ حبشہ کی طرف ہجرت کی۔

حضرت محمد صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم سے نکاح

حضور صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم نے حضرت خدیجہ رضی اللہ عنہا کے انتقال کے بعد ہحرت کے دسویں برس حضرت خولہ کے ذریعے حضرت ابوبکر صدیق اور حضرت سودہ سے اپنی شادی کی بات کی۔ وہ حضرت محمد صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم سے عمر میں بڑی تھیں۔ ان کی پہلی شادی سکران بن عمرو رضی اللہ عنہ سے ہوئی تھی۔ جن کا انتقال ہو گیا تو 7 رمضان (بعض روایات میں شوال) سن 10 نبوی میں حضور صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم کے نکاح میں آئیں۔[1]

بعد از حضور صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم

اور سخاوت و فیاض ان کے اوصاف کے نمایاں پہلو تھے۔ حضرت محمد کے وصال کے بعد ان کو وظیفہ ملا کرتا تھا جو وہ صدقہ کر دیا کرتی تھیں۔ خلافت امویہ کے پہلے خلیفہ معاویہ بن ابو سفیان نے ان کا مدینہ منورہ میں مکان 180،000 درہم میں خریدا۔ حضرت سودہ اکتوبر 674ء میں حضرت عمر فاروق رضی اللہ عنہ کے زمانۂ خلافت میں انتقال فرما گئیں۔

حوالہ جات

  1. ^ وکا، وی " سودہ بنت زمعہ." انسائیکلوپیڈیا آف اسلام، پہلا ایڈیشن (1913-1936). بریل آن لائن , 2012. حوالہ۔ 02 اکتوبر 2012 <http://referenceworks.brillonline.com/entries/encyclopaedia-of-islam-1/sawda-bint-zama-SIM_5208>

بیرونی روابط