اسلام اور سیاست

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
زمرہ جات


سیاست کا مفہوم[ترمیم]

سیاست (Politics) "ساس" سے مشتق ہے جو یونانی لفظ ہے ، اس کے معنی شہر و شہرنشین کے ہیں .

سیاست اہل اسلام کی اصطلاح میں[ترمیم]

اسلام میں سیاست اس فعل کو کہتے ہیں جس کے انجام دینے سے لوگ اصلاح سے قریب اور فساد سے دو ہوجائیں. اہل مغرب فن حکومت کو سیاست کہتے ہیں ،امور مملکت کا نظم ونسق برقرار رکھنے والوں کوسیاستدان کہا جاتا ہے۔

قرآن میں سیاست کا ذکر[ترمیم]

قرآن کریم میں لفظ سیاست تو نہیں البتہ ایسی بہت سی آیتیں موجود ہیں جو سیاست کے مفہوم کو واضح کرتی ہیں، بلکہ قرآن کا بیشتر حصّہ سیاست پر مشتمل ہے، مثلاً عدل و انصاف ، ا مر بالمعروف و نہی عن المنکر ،مظلوموں سے اظہارِ ہمدردی وحمایت ،ظالم اور ظلم سے نفرت اور اس کے علاوہ انبیا ٴاور اولیأ کرام کا اندازِ سیاست بھی قرآن مجید میں بیان کیا گیا ہے۔


وقال لہم نبیّہم انّ اللّٰہ قد بعث لکم طالوت ملکاً ، قالوا انّی یکون لہ الملک علینا و نحن احق بالملک منہ ولم یوت سعة من المال قال انّ اللّٰہ اصطفہ علیکم وزادہ بسطة فی العلم والجسم واللّٰہ یوتی ملکہ من یشآء واللّٰہ واسع علیم “ (سورہٴ بقرہ، آیت ۲۴۷ )

”ان کے پیغمبر نے کہا کہ اللہ نے تمہارے لئے طالوت کو حاکم مقرر کیا ہے ،ان لوگوں نے کہا کہ یہ کس طرح حکومت کریں گے ،ان کے پاس تو مال کی فراوانی نہیں ہے ،ان سے زیادہ تو ہم ہی حقدار حکومت ہیں ،نبی نے جواب دیا کہ انہیں اللہ نے تمہارے لئے منتخب کیا ہے اور علم و جسم میں وسعت عطا فرمائی ہے اور اللہ جسے چاہتا ہے اپنا ملک دے دیتا ہے کہ وہ صاحب وسعت بھی ہے اور صاحب علم بھی “

اس آیت سے ان لوگوں کے سیاسی فلسفہ کی نفی ہوتی ہے جو سیاستمدار کے لئے مال کی فراوانی وغیرہ کو معیار قرار دیتے ہیں ،سیاستمدار کے لئے ذاتی طور پر ” غنی “ ہونا کا فی نہیں ہے بلکہ اسے عالم وشجاع ہونا چاہئے

خلاصہ[ترمیم]

  • لغت میں سیاست کے معنی ٰ: حکومت چلانا اور لوگوں کی امر و نہی کے ذریعہ اصلاح کرنا ہے
  • اصطلاح میں : فن حکومت اور لوگوں کو اصلاح سے قریب اور فساد سے دور رکھنے کو سیاست کہتے ہیں

قرآن میں سیاست کے معنی ٰ : حاکم کا لوگوں کے درمیان حق کے ساتھ فیصلہ کرنا، معاشرے کو ظلم و ستم سے نجات دینا ، امر بالمعروف و نہی عن المنکر کرنا اور رشوت وغیرہ کو ممنوع قرار دینا ہے

  • حدیث میں سیاست کے معنی : عدل و انصاف اور تعلیم و تربیت کے ہیں
  • علمأ کی نظر میں : رسول خدا اور ائمہ معصومین کی روش ،استعمار سے جنگ ،مفاصد سے روکنا ،نصیحت کرنا سیاست ہے
  • فلاسفہ کی نظر میں: فلاسفہ کے نزدیک فن حکومت، اجتماعی زندگی کا سلیقہ،صحیح اخلاق کی ترویج وغیرہ سیاست ہے

چوں کہ انسان خود بخود مندرجہ بالا امور سے عہدہ برآ نہیں ہو سکتا،لہٰذا کسی ایسے قانون کی ضرورت ہے جو انسانوں کو بہترین زندگی کا سلیقہ سکھائے ،جس کو دین کہتے ہیں۔


بیرونی روابط[ترمیم]

دین اور سیاست