اگست 2016ء کوئٹہ بم دھماکا

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
کوئٹہ خودکش بم دھماکا 2016ء
بسلسلہ شمال مغرب پاکستان میں جنگ
Balochistan in Pakistan (claims hatched).svg
پاکستان میں بلوچستان کا نقشہ
مقام کوئٹہ، بلوچستان، پاکستان
تاریخ 8 اگست 2016ء
حملے کی قسم خودکش حملہ
ہلاکتیں 93
زخمی 100+
مرتکبین

8 اگست 2016ء کو دہشت گردوں نے پاکستان میں شہر کوئٹہ کے سرکاری ہسپتال پر خود کش بم حملہ کیا اور گولیاں برسائیں جس کے نتیجے میں 77 افراد ہلاک، جبکہ 100 سے زائد زخمی ہوئے۔ متاثرین کی بڑی تعداد میں وکلا شامل تھے جو ہسپتال میں وکیل بلال انور کاسی کی میت پر جمع ہوئے تھے۔ بلال انور، بلوچستان بار ایسوسی ایشن کے صدر تھے جنھیں نامعلوم شخص نے گولی مار کر ہلاک کر دیا تھا۔ اس دہشت گردانہ کارروائی کی ذمہ داری جماعت الاحرار اور دولت اسلامیہ نے قبول کی ہے۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Shah (8 اگست 2016)۔ "70 dead as blast hits Quetta Civil Hospital after lawyer's killing"۔ Dawn۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 8 اگست 2016۔
  2. The Newspaper's Staff Correspondent (9 اگست 2016)۔ "Quetta in a daze after massacre"۔ Dawn۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 9 اگست 2016۔