ریاست باونی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
बावनी रियासत / باونی ریاست
ریاست باونی
برطانوی ہند کی نوابی ریاست

1784–1948
پرچم نشان
پرچم نشان
Location of باونی
Baoni State (کدورا) معجم سلطانی ہند میں
تاریخ
 -  قیام 1784
 -  تقسیم ہند 1948
رقبہ
 -  1901 313 کلومیٹر2 (121 مربع میٹر)
آبادی
 -  1901 19,780 
کثافت 63.2 /کلومیٹر2  (163.7 /مربع میٹر)
معجم سلطانی ہند[1]

ریاست باونی ہندوستان کے برطانوی عہد استعمار کی ایک چھوٹی سند نوابی ریاست تھی۔[2] یہ ریاست بندیلکھنڈ ایجنسی کی ریاستوں میں تنہا مسلم ریاست تھی۔ اس کے حکمران کو برطانوی راج میں گیارہ توپوں کی سلامی دی جاتی تھی۔ باونی ریاست کے شاہی خاندان کا دعویٰ ہے کہ وہ حیدرآباد دکن کے آصف جاہی خاندان سے تعلق رکھتے ہیں اور اس لحاظ سے ان کا سلسلہ نسب پہلے اسلامی خلیفہ ابو بکر صدیق سے جا ملتا ہے۔[3]

ریاست باونی اترپردیش کے بیتوا، جمنا دو آبے میں قائم تھی اور اس کا پایہ تخت کدورا میں واقع تھا۔ ریاست کی سرحدیں شمال میں ضلع کاؤنپور سے، مغرب میں ضلع جالون سے اور مشرق مں ہمیرپور سے ملتی تھیں۔ نیز جنوب مشرق میں کچھ حصے ریاست بیری سے بھی متصل تھے۔[4] لفظ "باونی" ہندوستانی زبان کے لفظ باون (52) سے نکلا ہے۔[5] اسے باونی کہنے کی وجہ یہ تھی کہ جب اس ریاست کو سند دی گئی تو اس وقت اس کے رقبے میں کل باون گاؤں تھے۔ سنہ 1901ء میں ریاست باؤنی کی مجموعی آبادی 19780 نفوس پر مشتمل تھی جس میں ستاسی فیصد ہندو اور بارہ فیصد مسلمان تھے۔[4]

تاریخ[ترمیم]

ریاست باونی کو سنہ 1784ء میں عماد الدین و الملک غازی خان نے قائم کیا تھا جن کا نظام حیدرآباد کے آصف جاہی شاہی سلسلہ کی ایک شاخ سے تعلق تھا، عماد الدین مغلیہ سلطنت میں وزیر تھے۔ انہوں نے مرہٹہ پیشوا سے معاملہ کرکے کالپی کے قریب باون گاؤں پر مشتمل جاگیر حاصل کی تھی۔ سنہ 1806ء میں مرہٹہ سلطنت کی شکست کے بعد ریاست باونی برطانیہ کے زیر تسلط آگئی۔ سنہ 1815ء کے بعد ریاست کا پایہ تخت کالپی سے کدورا منتقل ہو گیا۔[6]

ریاست کے آخری تاج دار محمد الحسن مشتاق نے 15 اگست 1947ء کو بھارت ڈومینین میں انضمام کے معاہدے پر دستخط کیے لیکن 2 اپریل 1948ء کو ریاست کے وندھے پردیش میں شامل ہونے تک حکمران رہے اور بعد ازاں 31 دسمبر 1949ء تک صدر ریاست کی حیثیت سے ان کا عہدہ باقی رہا۔[7]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Hunter, Sir William Wilson; Trübner & Co., London 1885
  2. Buyers, Christoper۔ "Baoni"۔ The Royal Ark۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2010-04-12۔
  3. Sir William Hunter Hunter؛ James Sutherland Cotton؛ Richard Burn؛ William Stevenson Meyer۔ The Imperial Gazetteer of India۔ Oxford: Great Britain India Office, Clarendon Press۔
  4. ^ ا ب mperial Gazetteer of India, v. 6, p. 414.
  5. The Baoni State
  6. Baoni II, The Royal Ark
  7. Baoni Princely State (11 gun salute)

بیرونی روابط[ترمیم]

متناسقات: 25°59′N 79°51′E / 25.98°N 79.85°E / 25.98; 79.85