فیفا عالمی کپ فائنل مقابلوں کی فہرست

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
فیفا عالمی کپ فائنل مقابلوں کی فہرست
قیام1930؛ 94 برس قبل (1930)
علاقہبین الاقوامی (فیفا)
ٹیموں کی تعداد204 (کوالیفائرز)
32 (فائنل)
موجودہ چیمپئنز ارجنٹائن (تیسری مرتبہ)

فیفا عالمی کپ ایک بین الاقوامی ایسوسی ایشن فٹ بال مقابلہ ہے جس کا آغاز 1930ء میں ہوا۔ اس میں فیفا کی مردوں کی قومی ایسوسی ایشن فٹ بال ٹیمیں حصہ لیتی ہیں۔ یہ ٹورنامنٹ 1930ء کے بعد سے ہر چار سال بعد ہوتا ہے سوائے 1942ء اور 1946ء میں جب دوسری جنگ عظیم کی وجہ سے اس کا انعقاد نہیں کیا گیا تھا۔ ورلڈ کپ کا فائنل میچ مقابلے کا آخری میچ ہوتا ہے جو صرف دو ٹیموں کے درمیان کھیلا جاتا ہے اور یہ نتیجہ طے کرتا ہے کہ کون سا ملک آئندہ چار سال کے لیے عالمی چیمپئن بنے گا۔ یہ ایک واحد میچ ہے جس کا فیصلہ مقررہ وقت میں ہوتا ہے۔ قرعہ اندازی کی صورت میں اضافی وقت استعمال کیا جاتا ہے۔ اگر اسکور پھر بھی برابر ہو تو پینلٹی شوٹ آؤٹ فاتح کا تعین کرتا ہے۔ [1] 1986ء سے نافذ قوانین کے تحت اضافی وقت کے بعد بھی ٹائی ہونے والا فائنل دوبارہ کھیلا جاتا ہے ، حالانکہ یہ کبھی ضروری ثابت نہیں ہوا۔ گولڈن گول کا اصول 1998ء اور 2002ء میں اضافی وقت کے دوران شروع کیا گیا لیکن اس پر بھی عمل نہیں کیا گیا۔

فائنل جیتنے والی ٹیم کو فیفا ورلڈ کپ ٹرافی ملتی ہے اور اس ٹیم کا نام ٹرافی کے نیچے کندہ ہوتا ہے۔[2] ٹورنامنٹ میں شامل 80 مختلف ممالک میں سے 13 نے فائنل میں جگہ بنائی اور 8 نے کامیابی حاصل کی ہے۔ برازیل وہ واحد ٹیم جس نے ہر ورلڈ کپ میں شرکت کی اور سب سے کامیاب ٹیم بھی رہی جس نے پانچ ٹائٹل جیتے اور دو مرتبہ دوسرے نمبر پر رہے۔ [3] اٹلی اور جرمنی کے پاس چار چار ٹائٹل ہیں، جرمنی کسی بھی دوسری ٹیم سے زیادہ آٹھ دفعہ فائنل تک پہنچا ہے۔ موجودہ چیمپئن ارجنٹائن کے پاس تین، یوراگوئے اور فرانس کے پاس دو دو جبکہ انگلینڈ اور اسپین کے پاس ایک ایک ٹائٹل ہے۔ چیکوسلواکیہ ، ہنگری ، سویڈن ، نیدرلینڈز اور کروشیا بغیر جیت کے فائنل کھیل چکے ہیں۔ فائنل میں اب تک صرف یورپ ( یوئیفا ) اور جنوبی امریکا (جنوب امریکی فٹ بال کنفیڈریشن ) کی ٹیموں نے حصہ لیا ہے۔ ارجنٹائن نے 2022ء میں قطر کے لوسیل اسٹیڈیم میں ہونے والے حالیہ فائنل میں فرانس کو پنالٹیز پر شکست دی تھی۔[4][5][6]

فائنلوں کی فہرست[ترمیم]

صفحہ ماڈیول:Location map/styles.css میں کوئی مواد نہیں ہے۔

کلید
میچ اضافی وقت میں جیتا گیا
میچ پینلٹی شوٹ آؤٹ پر جیتا گیا

[7]

فائنل میچوں کی فہرست، ان کی جگہ اور مقامات، فائنل کھیلنے والی ٹیمیں اور حتمی اسکور
سال فاتحین فائنل اسکور[8] دوسرا مقام جگہ مقام حاضری حوالہ جات
1930ء یوراگوئے  4–2  ارجنٹائن سینتاریو اسٹیڈیم مونتیبیدیو، یوراگوئے 80,000 [9][10]
1934ء اطالیہ    

2–1
[n 1]

 چیکوسلوواکیہ استادیو نازیونیل پی این ایف روم، اطالیہ 50,000 [11][12]
1938ء اطالیہ  4–2  مجارستان کولومب اولمپک اسٹیڈیم پیرس، فرانس 45,000 [13][14]
1950ء[n 2] یوراگوئے  2–1
[n 3]
 برازیل ماراکانا اسٹیڈیم ریو دے جینیرو، برازیل 199,854[15] [16][17]
1954ء  جرمنی 3–2  مجارستان وانکدورف اسٹیڈیم برن، سویٹزرلینڈ 60,000 [18][19]
1958ء برازیل  5–2  سویڈن روسوندا اسٹیڈیم بلدیہ سولانا، سویڈن 51,800 [20][21]
1962ء برازیل  3–1  چیکوسلوواکیہ استادیو نیسیونال سینٹیاگو، چلی، چلی 69,000 [22][23]
1966ء انگلستان    

4–2
[n 4]

 مغربی جرمنی ویمبلی اسٹیڈیم (1923ء) لندن، انگلستان 93,000 [24][25]
1970ء برازیل  4–1  اطالیہ استادیو آزتیکا میکسیکو شہر، میکسیکو 107,412 [26][27]
1974ء  جرمنی 2–1  نیدرلینڈز اولیمپیا استادیون، میونخ میونخ، مغربی جرمنی 75,200 [28][29]
1978ء ارجنٹائن    

3–1
[n 5]

 نیدرلینڈز استادیو مونومنتال بیونس آئرس، ارجنٹائن 71,483 [30][31]
1982ء اطالیہ  3–1  مغربی جرمنی سینٹیوگو برنابیو سٹیدیم میدرد، ہسپانیہ 90,000 [32][33]
1986ء ارجنٹائن  3–2  مغربی جرمنی استادیو آزتیکا میکسیکو شہر، میکسیکو 114,600 [34][35]
1990ء  جرمنی 1–0  ارجنٹائن استادیو اولمپیکو روم، اطالیہ 73,603 [36][37]
1994ء برازیل    

0–0
[n 6]

 اطالیہ روز باؤل (اسٹیڈیم) پاساڈینا، کیلیفورنیا، ریاستہائے متحدہ امریکا 94,194 [38][39]
1998ء فرانس  3–0  برازیل استد دے فرانس سینٹ-ڈینس، فرانس 80,000 [40][41]
2002ء برازیل  2–0  جرمنی انٹرنیشنل اسٹیڈیم (یوکوہاما) یوکوہاما، جاپان 69,029 [42][43]
2006ء اطالیہ    

1–1
[n 7]

 فرانس اولیمپیا استادیون (برلن) برلن، جرمنی 69,000 [44][45]
2010ء ہسپانیہ    

1–0
[n 8]

 نیدرلینڈز فرسٹ نیشنل بینک اسٹیڈیم، جوہانسبرگ جوہانسبرگ، جنوبی افریقا 84,490 [46][47]
2014ء جرمنی    

1–0
[n 9]

 ارجنٹائن ماراکانا اسٹیڈیم ریو دے جینیرو، برازیل 74,738 [48][49]
2018ء فرانس  2018ء فیفا عالمی کپ فائنل|4–2  کرویئشا لوژنئکی اسٹیڈیم ماسکو، روس 78,011 [50][51]
2022ء  ارجنٹائن 3–3( 2022ء فیفا عالمی کپ فائنل) .( اضافی وقت (کھیل)

(4–2 .( پینلٹی شوٹ آؤٹ )

فرانس  لوسیل بین الاقوامی اسٹیڈیم لوسیل، قطر 88,966 [52]
آئندہ فائنل
سال فاتح بمقابلہ دوسرا مقام جگہ مقام حاضری حوالہ جات
2026ء ریاستہائے متحدہ امریکا

نتائج[ترمیم]

جیتنے والے ممالک کا نقشہ
نتائج بلحاظ قوم
قومی ٹیم فاتح دوسرا مقام کل فائنل جیت سال دوسرا مقام سال
 برازیل 5 2 7 1958ء، 1962ء، 1970ء، 1994ء، 2002ء 1950ء، 1998ء
 جرمنی 4 4 8 1954ء، 1974ء، 1990ء، 2014ء 1966ء، 1982ء، 1986ء، 2002ء
 اطالیہ 4 2 6 1934ء، 1938ء، 1982ء، 2006ء 1970ء، 1994ء
 ارجنٹائن 3 3 6 1978 ، 1986 ، 2022 1930ء، 1990ء، 2014ء
 فرانس 2 2 4 1998ء، 2018ء 2006 ، 2022
 یوراگوئے 2 0 2 1930ء، 1950ء
 انگلستان 1 0 1 1966ء
 ہسپانیہ 1 0 1 2010ء
 نیدرلینڈز 0 3 3 1974ء، 1978ء، 2010ء
 چیکوسلوواکیہ 0 2 2 1934ء، 1962ء
 مجارستان 0 2 2 1938ء، 1954ء
 سویڈن 0 1 1 1958ء
 کرویئشا 0 1 1 2018ء
کنفیڈریشن کے نتائج
کنفیڈریشن ظاہری شراکتیں فاتحین دوسرا مقام
یوئیفا 28 12 16
جنوب امریکی فٹ بال کنفیڈریشن 14 9 5

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Laws of the Game" (PDF)۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 06 دسمبر 2008 میں اصل (PDF) سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 09 فروری 2009 
  2. "Taça da Copa do Mundo chega ao Brasil (World Cup trophy arrives in Brazil)"۔ Globo TV۔ 21 April 2014۔ 06 جون 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 22 اپریل 2014 
  3. "World Cup Spotlight on Brazil"۔ CNN۔ 01 اپریل 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 29 جنوری 2007 
  4. "فیفا ورلڈ کپ 2022: ارجنٹینا 36 برس بعد ایک مرتبہ پھر ورلڈ کپ فاتح، فرانس تیسرا ورلڈ کپ نہ جیت سکا"۔ BBC News اردو۔ 2022-12-18۔ اخذ شدہ بتاریخ 14 نومبر 2023 
  5. "سنسنی خیز مقابلے کے بعد ارجنٹینا عالمی کپ جیت گیا"۔ www.trt.net.tr۔ اخذ شدہ بتاریخ 14 نومبر 2023 
  6. "FIFA World Cup history: Past winners, runners-up, leading goalscorers and Golden Ball recipients"۔ The Roar (بزبان انگریزی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 14 نومبر 2023 
  7. * The "Year" column refers to the year the World Cup was held, and wikilinks to the article about that tournament. The wikilinks in the "Final score" column point to the article about that tournament's final game. Links in the "Winners" and "Runners-up" columns point to the articles for the national football teams of the countries, not the articles for the countries.
  8. "FIFA World Cup Finals since 1930" (PDF)۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل (PDF) سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 فروری 2009 
  9. "1930 FIFA World Cup Uruguay"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 20 اکتوبر 2007 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  10. "World Cup history – Uruguay 1930"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  11. ^ ا ب "1934 FIFA World Cup Italy"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 23 مارچ 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  12. ^ ا ب "World Cup history – Italy 1934"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  13. "1938 FIFA World Cup France"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 21 جنوری 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  14. "World Cup history – France 1938"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  15. Mike Janela (جون 12, 2018)۔ "World Cup Rewind: Largest attendance at a match in the 1950 Brazil final"۔ گنیز ورلڈ ریکارڈز۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ جون 27, 2018 
  16. "1950 FIFA World Cup Brazil"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  17. "World Cup history – Brazil 1950"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  18. "1954 FIFA World Cup Switzerland"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 20 جولائی 2012 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  19. "World Cup history – Switzerland 1954"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  20. "1958 FIFA World Cup Sweden"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 17 فروری 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  21. "World Cup history – Sweden 1958"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  22. "1962 FIFA World Cup Chile"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 17 فروری 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  23. "World Cup history – Chile 1962"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  24. ^ ا ب "1966 FIFA World Cup England"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 25 مارچ 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  25. ^ ا ب "World Cup history – England 1966"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  26. "1970 FIFA World Cup Mexico"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 25 جنوری 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  27. "World Cup history – Mexico 1970"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  28. "1974 FIFA World Cup Germany"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 26 جنوری 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  29. "World Cup history – West Germany 1974"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  30. ^ ا ب "1978 FIFA World Cup Argentina"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 12 فروری 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  31. ^ ا ب "World Cup history – Argentina 1978"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  32. "1982 FIFA World Cup Spain"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 30 جنوری 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  33. "World Cup history – Spain 1982"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  34. "1986 FIFA World Cup Mexico"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 29 جنوری 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  35. "World Cup history – Mexico 1986"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  36. "1990 FIFA World Cup Italy"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 15 نومبر 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  37. "World Cup history – Italy 1990"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  38. ^ ا ب "1994 FIFA World Cup USA"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 2 فروری 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  39. ^ ا ب "World Cup history – USA 1994"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  40. "1998 FIFA World Cup France"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 21 جولائی 2011 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  41. "World Cup history – France 1998"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  42. "2002 FIFA World Cup Korea/Japan"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 30 جنوری 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  43. "World Cup history – Japan & South Korea 2002"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  44. ^ ا ب "2006 FIFA World Cup Germany"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  45. ^ ا ب "Zidane off as Italy win World Cup"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 4 مئی 2006۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 جنوری 2009 
  46. ^ ا ب "2010 FIFA World Cup South Africa"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 12 مئی 2012 
  47. ^ ا ب "Netherlands 0–1 Spain (aet)"۔ BBC Sport (British Broadcasting Corporation)۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 12 مئی 2012 
  48. ^ ا ب "Estadio Do Maracana, Rio de Janeiro"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 18 جنوری 2012۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 4 جون 2014 
  49. ^ ا ب Phil McNulty (13 جولائی 2014)۔ "Germany 1–0 Argentina"۔ BBC Sport۔ British Broadcasting Corporation۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 19 جولائی 2014 
  50. "Formidable France secure second title"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 15 July 2018۔ 15 جولا‎ئی 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 04 جون 2019 
  51. "More than half the world watched record-breaking 2018 World Cup"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 21 December 2018۔ 04 جون 2019 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 04 جون 2019 
  52. "Argentina and Messi spot on for World Cup glory"۔ FIFA.com (Fédération Internationale de Football Association)۔ 18 December 2022۔ اخذ شدہ بتاریخ 18 دسمبر 2022 
  1. Score was 1–1 after 90 minutes.[11][12]
  2. The 1950 FIFA World Cup did not have a final, rather, the tournament was decided by a 4-team round robin phase۔
  3. Not the final but the decisive match of the final group stage۔
  4. Score was 2–2 after 90 minutes.[24][25]
  5. Score was 1–1 after 90 minutes.[30][31]
  6. Score was 0–0 after 120 minutes. Brazil won 3–2 on penalties.[38][39]
  7. Score was 1–1 after 120 minutes. Italy won 5–3 on penalties.[44][45]
  8. Score was 0–0 after 90 minutes.[46][47]
  9. Score was 0–0 after 90 minutes.[48][49]

بیرونی روابط[ترمیم]