2016ء میں پاکستان کرکٹ ٹیم انگلینڈ میں

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

2016ء میں پاکستان قومی کرکٹ ٹیم انگلینڈ اور آئر لینڈ کے دورے پر گئی، جہاں 3 جولائی تا 7 ستمبر 2016ء تک 4 ٹیسٹ، 5 ایک روزہ اور ایک ٹوئنٹی20 بین الاقوامی (ٹی/20) میچ انگلینڈ قومی کرکٹ ٹیم کے خلاف کھیلے۔[1] اور دو تین روزہ میچ سمرسیٹ اور سسیکس سے ٹیسٹ سیریز سے پہلے کھیلے، ایک دو روزہ میچ ورسٹر شائر سے ٹیسٹ سیریز کے دوران میں اور دو ایک روزہ میچ آئرلینڈ کرکٹ ٹیم کے خلاف ایک روزہ سیریز سے قبل کھیلے۔[2][3]

انگلینڈ[ترمیم]

2016ء پاکستان انگلینڈ میں
Flag of England.svg
انگلینڈ
Flag of Pakistan.svg
پاکستان
تاریخ 3 جولائی – 7 ستمبر 2016
کپتان Alastair Cook (ٹیسٹ) مصباح الحق (ٹیسٹ) اظہر علی (ایک روزہ)
ٹیسٹ سیریز
ایک روزہ بین الاقوامی سیریز
ٹی-20 بین الاقوامی سیریز
Super Series points
انگلینڈ 8, پاکستان 4

کھلاڑی[ترمیم]

ٹیسٹ ایک روزہ ٹی/20
 انگلستان[4][5]  پاکستان[6]  انگلستان  پاکستان[7]  انگلستان  پاکستان

Toby Roland-Jones was dropped from the England Test squad after James Anderson and Ben Stokes were recalled for the 2nd Test.

ٹور میچ[ترمیم]

فرسٹ کلاس: سمرسٹ بمقابلہ پاکستانی[ترمیم]

3–5 جولائی 2016
اسکور کارڈ
بمقابلہ
359/8d (100 اوور)
یونس خان 104 (177)
Paul van Meekeren 3/78 (26 اوور)
128 (34.1 اوور)
James Hildreth 47* (68)
سہیل خان 3/26 (10 اوور)
236/4d (59.4 اوور)
اظہر علی 101* (168)
Jack Leach 2/61 (18 اوور)
258/8 (73 اوور)
Marcus Trescothick 106 (111)
یاسر شاہ 4/107 (32 اوور)
میچ بلا نتیجہ رہا
کاؤنٹی گراؤنڈ، ولٹن، سومرسیٹ
امپائر: Tom Lungley (انگلینڈ) اور Billy Taylor (انگلینڈ)
  • پاکستان نے ٹاس جیت کر بلے بازی کی۔
  • Dominic Bess اورAdam Hose (دونوں سمرسیٹ سے ) نے فرسٹ کلاس کرکٹ کا آغاز کیا۔

فرسٹ کلاس: سسیکس بمقابلہ پاکستانی[ترمیم]

8–10 جولائی 2016
اسکور کارڈ
بمقابلہ
363/5d (99 اوور)
اظہر علی 145 (266)
Jofra Archer 4/49 (22 اوور)
291/5d (63.5 اوور)
Harry Finch 103 (140)
عمران خان 2/60 (13 اوور)
71/1 (24 اوور)
شاہ مسعود 38* (42)
Jofra Archer 1/24 (9 اوور)
میچ بلا نتیجہ
County Ground، ہوو
امپائر: Jeff Evans (انگلینڈ) اور Russell Warren (انگلینڈ)
  • سسیکس نے ٹاس جیت کر بلے بازی کی۔
  • تیسرے دن بارش کی وجہ سے نہیں کھیلا جا سکا۔
  • Jofra Archer اور Philip Salt (دونوں سسیکس) نے فنسٹ کلاس کرکٹ کا آغاز کیا۔

دو روزہ: بمقابلہ پاکستان ووسٹرشائر[ترمیم]

29–30 جولائی 2016
اسکور کارڈ
بمقابلہ
261/3d (80 اوور)
اظہر علی 81 (140)
Ed Barnard 1/30 (15 اوور)
260/6 (76 اوور)
Tom Kohler-Cadmore 73 (113)
راحت علی 2/29 (11 اوور)
بلا نتیجہ
New Road، ووسٹر
امپائر: Martin Saggers (انگلینڈ) اور Chris Watts (انگلینڈ)
  • ورسٹر شائر نے ٹاش جیت کر پاکستانیوں کو بلے بازی کی دعوت دی

ٹیسٹ مقابلے[ترمیم]

پہلا ٹیسٹ[ترمیم]

14–18 جولائی 2016
اسکور کارڈ
بمقابلہ
339 (99.1 اوور)
مصباح الحق 114 (199)
Chris Woakes 6/70 (24 اوور)
272 (79.1 اوور)
Alastair Cook 81 (124)
یاسر شاہ 6/72 (29 اوور)
215 (79.1 اوور)
اسد شفیق 49 (96)
Chris Woakes 5/32 (17 اوور)
207 (75.5 اوور)
Jonny Bairstow 48 (147)
یاسر شاہ 4/69 (31 اوور)
پاکستان 57 دوڑوں سے جیت گیا
لارڈز، لندن
امپائر: کمار دھرما سینا (سری لنکا) اور Joel Wilson (ویسٹ انڈیز)
Player of the match: یاسر شاہ (پاکستان)
  • پاکستان نے ٹاس جیت کر بلے بازی کی۔
  • Jake Ball (انگلینڈ) نے پہلا ٹیسٹ کھیلا۔
  • مصباح الحق (پاکستان) سب سے معمر کپتان بن گيا جس نے ٹیسٹ میں سنچری بنائی۔[8]
  • یاسر شاہ (پاکستان) پہلا لیگ اسپینر بن گيا جس نے 1996ء کے بعد لارڈز پر 5 ووکٹیں حاصل کیں اور اور واحد ایشیائی جس نے لارڈز پر 10 ووکٹیں حاصل کیں۔[9]
  • Chris Woakes (انگلینڈ) نے پہلی بار میچ میں 10 ووکٹیں لیں۔[10]
  • Stuart Broad (انگلینڈ) 350ویں ٹیسٹ ووکٹ لی۔[11]
  • یہ 20 سال میں انگلینڈ کے خلاف، لارڈز کے میدان پر پاکستان کی پہلی فتح تھی، مجموعی طور پر یہ چوتھی اور ایشیائی ٹیم کی صرف سے سب سے بڑی فتح تھی۔[12][13]
  • پوائنٹ: پاکستان 4، انگلینڈ 0۔

دوسرا ٹیسٹ[ترمیم]

22–26 جولائی 2016
اسکور کارڈ
بمقابلہ
589/8d (152.2 اوور)
جو روٹ 254 (406)
وہاب ریاض 3/106 (26.2 اوور)
198 (63.4 اوور)
مصباح الحق 52 (114)
Chris Woakes 4/67 (16 اوور)
173/1d (30 اوور)
Alastair Cook 76* (78)
محمد عامر 1/43 (11 اوور)
234 (70.3 اوور)
محمد حفیظ 42 (72)
Chris Woakes 3/41 (15.3 اوور)
انگلینڈ 330 دوڑوں سے جیت گيا
Old Trafford، مانچسٹر
امپائر: کمار دھرما سینا (سری لنکا) اور داڈ ثکر (آسٹریلیا)
Player of the match: جو روٹ (انگلینڈ)
  • انگلینڈ نے ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کی۔
  • Alastair Cook (انگلینڈ) نے بطور کپتان 50واں ٹیسٹ میچ کھیلا۔[14]
  • جو روٹ (انگلینڈ) اپنے ٹیسٹ دورم یں سب سے زیادہ دوڑیں بنائیں، اس سے پہلے اس نے 200 ناٹ آؤٹ کے ساتھ تھا۔[15]
  • پوائنٹ: انگلینڈ 4، پاکستان 0۔

تیسرا ٹیسٹ[ترمیم]

3–7 اگست 2016
اسکور کارڈ
بمقابلہ
297 (86 اوور)
Gary Ballance 70 (150)
Sohail Khan 5/96 (23 اوور)
400 (136 اوور)
اظہر علی 139 (293)
Chris Woakes 3/79 (30 اوور)
445/6d (129 اوور)
معین علی 86* (96)
محمد عامر 2/75 (31 اوور)
201 (70.5 اوور)
Sami Aslam 70 (167)
Stuart Broad 2/24 (15 اوور)
انگلینڈ 141 دوڑوں سے جیت گيا
Edgbaston، برمنگہم
امپائر: Bruce Oxenford (آسٹریلیا) اور Joel Wilson (ویسٹ انڈیز)
Player of the match: معین علی (انگلینڈ)
  • پاکستان نے ٹاس جیت کر انکلینڈ کو بلے باری کی دعوت دی۔
  • This was England's 500th Test match at home.[16]
  • Sohail Khan (Pak) took his first five-wicket haul in Tests.[17]
  • پوائنٹ: انگلینڈ 4، پاکستان 0۔

چوتھا ٹیسٹ[ترمیم]

11–15 اگست 2016
اسکور کارڈ
بمقابلہ
328 (76.4 اوور)
معین علی 108 (152)
سہیل خان 5/68 (20.4 اوور)
542 (146 اوور)
یونس خان 218 (308)
Chris Woakes 3/82 (30 اوور)
88/4 (31 اوور)
جو روٹ 39 (46)
یاسر شاہ 3/15 (7 اوور)
Stumps, Day 3
اوول، لندن
امپائر: Marais Erasmus (جنوبی افریقا) اور Bruce Oxenford (آسٹریلیا)

ایک روزہ مقابلے[ترمیم]

پہلا ایک روزہ[ترمیم]

24 اگست 2016 (د/ر)
اسکور کارڈ
بمقابلہ

دوسرا ایک روزہ[ترمیم]

27 اگست 2016
اسکور کارڈ
بمقابلہ

تیسرا ایک روزہ[ترمیم]

30 اگست 2016 (د/ر)
اسکور کارڈ
بمقابلہ

چوتھا ایک روزہ[ترمیم]

1 ستمبر 2016 (د/ر)
اسکور کارڈ
بمقابلہ

پانچواں ایک رووء[ترمیم]

4 ستمبر 2016
اسکور کارڈ
بمقابلہ

ٹی/20[ترمیم]

واحد ٹی/20[ترمیم]

7 ستمبر 2016
اسکور کارڈ
بمقابلہ

آئر لینڈ[ترمیم]

Pakistan in Ireland in 2016
Cricket Ireland flag.svg
آئرلینڈ
Flag of Pakistan.svg
پاکستان
تاریخ 18 اگست – 20 اگست 2016
کپتان ولیم پورٹرفیلڈ اظہر علی
ایک روزہ بین الاقوامی سیریز

کھلاڑی[ترمیم]

ایک روزہ
 آئرلینڈ[19]  پاکستان[7]

ایک روزہ مقابلے[ترمیم]

پہلا ایک روزہ[ترمیم]

18 اگست 2016
اسکور کارڈ
بمقابلہ

دوسرا ایک روزہ[ترمیم]

20 اگست 2016
اسکور کارڈ
بمقابلہ

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Pakistan tour of England Schedule"۔ CricketSchedule.com۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 7 مئی 2016۔
  2. "ECB announces dates for 2016 international summer"۔ ecb.co.uk۔ England and Wales Cricket Board۔ 25 اگست 2015۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 25 اگست 2015۔
  3. "Pakistan vs England Schedule 2016"۔ Cricket.com.pk۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 8 مئی 2016۔
  4. "Ballance, Roland-Jones named in England squad"۔ ESPNcricinfo۔ ESPN Sports Media۔ 7 جولائی 2016۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 7 جولائی 2016۔
  5. "Anderson, Stokes, Rashid in England squad"۔ ESPNcricinfo۔ ESPN Sports Media۔ 18 جولائی 2016۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 18 جولائی 2016۔
  6. "Mohammad Amir picked for England tour"۔ ESPNcricinfo۔ ESPN Sports Media۔ 5 جون 2016۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 5 جون 2016۔
  7. ^ ا ب "Umar Gul returns to Pakistan's ODI squad tour"۔ ESPNcricinfo۔ ESPN Sports Media۔ 9 اگست 2016۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 9 اگست 2016۔
  8. Bharath Seervi (14 جولائی 2016)۔ "Oldest captain to score a Test century"۔ ESPNcricinfo۔ ESPN Sports Media۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 15 جولائی 2016۔
  9. Shiva Jayaraman (15 جولائی 2016)۔ "Cook passes Gavaskar and a rare five-for"۔ ESPNcricinfo۔ ESPN Sports Media۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 16 جولائی 2016۔
  10. Alan Gardner (16 جولائی 2016)۔ "Woakes stars but Pakistan stretch ahead"۔ ESPNcricinfo۔ ESPN Sports Media۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 17 جولائی 2016۔
  11. Alan Gardner (17 جولائی 2016)۔ "Rahat triple-strike undermines England"۔ ESPNcricinfo۔ ESPN Sports Media۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 17 جولائی 2016۔
  12. "Pakistan beat England at Lord's after 20 years, go 1-0 up in series"۔ Indian Express۔ 17 جولائی 2016۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 17 جولائی 2016۔
  13. "Pakistan end long wait at Lord's: Here's a look at their previous three wins"۔ Indian Express۔ 17 جولائی 2016۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 17 جولائی 2016۔
  14. "Cook equals Gooch, Yasir made to toil"۔ ESPNcricinfo۔ ESPN Sports Media۔ 22 جولائی 2016۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 23 جولائی 2016۔
  15. "England v Pakistan: Joe Root hits 254 as hosts dominate at Old Trafford"۔ BBC Sport۔ BBC Sport۔ 23 جولائی 2016۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 23 جولائی 2016۔
  16. "Finn in as teams prepare for 'English Gabba'"۔ ESPNcricinfo۔ ESPN Sports Media۔ 3 اگست 2016۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 اگست 2016۔
  17. "Sohail's comeback five keeps England to 297"۔ ESPNcricinfo۔ ESPN Sports Media۔ 3 اگست 2016۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 5 اگست 2016۔
  18. "Moeen at No.7, and England's fastest innings against Pakistan"۔ ESPNcricinfo۔ ESPN Sports Media۔ 11 اگست 2016۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 11 اگست 2016۔
  19. "Boost for Ireland ahead of Pakistan series"۔ Cricket Ireland۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 28 جولائی 2016۔
Midori Extension.svg یہ ایک نامکمل مضمون ہے۔ آپ اس میں اضافہ کر کے ویکیپیڈیا کی مدد کر سکتے ہیں۔

بیرونی روابط[ترمیم]

سانچہ:International cricket tours of England سانچہ:International cricket in 2016 سانچہ:2016 English cricket season