لیوس دی بروگلی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
لیوس دی بروگلی
Louis de Broglie (فرانسیسی)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقامی نام (P1559) ویکی ڈیٹا پر
Image illustrative de l'article لیوس دی بروگلی خطاء تعبیری: غیر تسلیم شدہ لفظ "px"۔

معلومات شخصیت
پیدائش 15 اگست 1892[1][2][3]  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
Dieppe[*]   خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
وفات 19 مارچ 1987 (95 سال)[1][2][3]  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
Louveciennes[*]   خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام وفات (P20) ویکی ڈیٹا پر
قومیت French
رکن رائل سویڈش اکیڈمی آف سائنسز،French Academy of Sciences،سائنس کی روسی اکادمی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں رکن در (P463) ویکی ڈیٹا پر
عملی زندگی
المؤسسات Sorbonne
University of Paris
مادر علمی Sorbonne
ڈاکٹری مشیر Paul Langevin
ڈاکٹری شاگرد Cécile DeWitt-Morette
Bernard d'Espagnat
Jean-Pierre Vigier
Alexandru Proca
پیشہ طبیعیات دان[4]،ریاضی دان،استاد جامعہ،نظری طبیعیات  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر
تصنیفی زبان فرانسیسی زبان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں بولی، لکھی اور دستخط کی گئیں زبانیں (P1412) ویکی ڈیٹا پر
شعبۂ عمل طبیعیات
وجۂ شہرت Wave nature of electrons
De Broglie–Bohm theory
de Broglie wavelength
نوکری جامعہ پیرس  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں نوکری (P108) ویکی ڈیٹا پر
عسکری خدمات
لڑائیاں اور جنگیں پہلی جنگ عظیم  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں لڑائی (P607) ویکی ڈیٹا پر
اعزازات
Grand Cross of the Legion of Honour[*], نوبل انعام برائے طبیعیات, Commander of the French Order of Academic Palms[*], CNRS Gold medal[*], تمغا میکس پلانک, Kalinga Prize[*], Helmholtz Medal[*]   خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں وصول کردہ اعزازات (P166) ویکی ڈیٹا پر
دستخط
Signature Louis de Broglie.svg 

لیوس دی بروگلی فرانس کے ایک طبیعیات دان تھے جنھیں 1929ء میں نوبل انعام برائے طبیعیات دیا گیا، جس کی وجہ ایلکٹرون کی لہری خصوصیات کا پتہ لگانا تھا ۔یعنی انھوں نے بتایا تھا کہ الیکٹروں لہروں کی طرح حرکت کرتی ہیں۔

مزید[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ 1.0 1.1 مذکور : MacTutor History of Mathematics archive — خالق: John O'Connor اور Edmund Robertson
  2. ^ 2.0 2.1 مذکور : Comité des travaux historiques et scientifiques — Comité des travaux historiques et scientifiques: http://cths.fr/an/prosopo.php?id=107107 — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  3. ^ 3.0 3.1 مذکور : SNAC — ایس این اے سی آرک آئی ڈی: http://snaccooperative.org/ark:/99166/w6g44rtx — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  4. مذکور : مربوط فائل مقتدرہ — ربط : جی این ڈی- آئی ڈی — اجازت نامہ: سی سی زیرو