عابد شیر علی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
عابد شیر علی
وزیر مملکت برائے توائی
آغاز منصب
4 اگست 2017
صدر ممنون حسین
وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی
وزیر مملکت برائے پانی و بجلی
مدت منصب
جولائی 2013 – 28 جولائی 2017
صدر ممنون حسین
وزیر اعظم نواز شریف
رکن قومی اسمبلی پاکستان
آغاز منصب
18 نومبر 2002
معلومات شخصیت
پیدائش 21 نومبر 1971 (48 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
فیصل آباد  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
شہریت Flag of Pakistan.svg پاکستان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
جماعت پاکستان مسلم لیگ (ن)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں سیاسی جماعت کی رکنیت (P102) ویکی ڈیٹا پر
عملی زندگی
مادر علمی جامعہ پنجاب  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تعلیم از (P69) ویکی ڈیٹا پر
پیشہ سیاست دان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر

چوہدری عابد شیر علی; پیدائش 21 نومبر 1971) ایک پاکستانی سیاست دان اور موجودہ وزیر مملکت برائے توائی ہے، عابد شیر علی نے اگست 2017ء میں وزارت سنبھالی۔

اس سے پہلے 2013ء تا 2017ء تک وزیر مملکت برائے پانی و بجلی رہے۔ عابد قومی اسمبلی پاکستان کا سے 2002ء سے رکن ہے۔

ابتدائی زندگی[ترمیم]

عابد شیر علی کی ولادت 21 نومبر 1971 کو ہوئی۔[1]

سیاسی دور[ترمیم]

علی حلقہ این اے۔84 میں پاکستان عام انتخابات، 2002ء میں مسلم لیگ ن کے ٹکٹ پر قومی اسمبلی کا رکن منتخب ہوا۔[2][3][4]

علی حلقہ این اے۔84 میں پاکستان کے عام انتخابات، 2008ء میں مسلم لیگ ن کے ٹکٹ پر قومی اسمبلی کا رکن منتخب ہوا۔[4][5]

علی حلقہ این اے۔84 میں پاکستان کے عام انتخابات، 2013ء میں مسلم لیگ ن کے ٹکٹ پر قومی اسمبلی کا رکن منتخب ہوا۔[6][7][8][9]

جولائی 2013ء میں، کو پانی و بجلی کیوزارت سونپی گئی۔[7][8] 2017ہ مین وزیر اعظم نواز شریف کے استعفا دینے کے بعد، کابینہ ختم ہوئی۔[10]

اگست 2017ء عباسی وزارت کا قیام عمل میں آیا۔[11][12] جس میں عابد شیر علی کو وزیر مملکت برائے توانائی بنا دیا گيا، یہ وزارت 2017ء میں ہی قائم کی گئی۔[13][14]

ذاتی زندگی[ترمیم]

عابد شیر علی کی ولادت 21 نومبر 1971 کو ہوئی۔[1]

عابد شیر علی فیصل آباد کے سابق میئر اور پاکستان مسلم لیگ نواز شریف کے اہم رہنما چوہدھری شیر علی کا بیٹے ہے،[15] جو کلثوم نواز شریف کے قریبی رشتہ تھے۔[16]

عابد شیر علی کا نواز شریف بھتیجا ہے۔[7][9]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ ا ب "Detail Information"۔ www.pildat.org۔ PILDAT۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 26 اپریل 2017۔
  2. "Newcomers in Faisalabad"۔ DAWN.COM (انگریزی زبان میں)۔ 13 اکتوبر 2002۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 24 مارچ 2017۔
  3. "PML-N faces split in Faisalabad"۔ DAWN.COM (انگریزی زبان میں)۔ 12 ستمبر 2002۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 24 مارچ 2017۔
  4. ^ ا ب "Abid Sher in a scramble to sell his plots"۔ www.thenews.com.pk (انگریزی زبان میں)۔ 26 جون 2010۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 24 مارچ 2017۔
  5. "LHC accepts plea against Abid Sher Ali"۔ DAWN.COM (انگریزی زبان میں)۔ 30 دسمبر 2008۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 24 مارچ 2017۔
  6. "Parliamentary board session: PML-N begins screening out poll aspirants – دی ایکسپریس ٹریبیون"۔ دی ایکسپریس ٹریبیون۔ 10 اپریل 2013۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 مارچ 2017۔
  7. ^ ا ب پ "PML-N's Abid Sher Ali takes oath as Minister of State – دی ایکسپریس ٹریبیون"۔ دی ایکسپریس ٹریبیون۔ 26 جولائی 2013۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 مارچ 2017۔
  8. ^ ا ب "PML-N's Abid Sher Ali appointed as new state minister for power – دی ایکسپریس ٹریبیون"۔ دی ایکسپریس ٹریبیون۔ 22 جولائی 2013۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 مارچ 2017۔
  9. ^ ا ب "Trend continues: Family names once again dominate polls – دی ایکسپریس ٹریبیون"۔ دی ایکسپریس ٹریبیون۔ 16 مئی 2013۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 مارچ 2017۔
  10. "PM Nawaz Sharif steps down; federal cabinet stands dissolved"۔ Daily Pakistan Global۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 28 جولائی 2017۔
  11. "A 43-member new cabinet sworn in"۔ Associated Press Of Pakistan۔ 4 اگست 2017۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 4 اگست 2017۔
  12. "PM Khaqan Abbasi's 43-member cabinet takes oath today"۔ Pakistan Today۔ 4 اگست 2017۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 4 اگست 2017۔
  13. "Portfolios of Federal Ministers, Ministers of State announced"۔ Radio Pakistan۔ 5 اگست 2017۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 5 اگست 2017۔
  14. "Portfolios of federal, state ministers"۔ www.thenews.com.pk (انگریزی زبان میں)۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 5 اگست 2017۔
  15. "Why PML-N lost PP-72"۔ DAWN.COM (انگریزی زبان میں)۔ 16 اکتوبر 2013۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 مارچ 2017۔
  16. "Sher Ali, son meet Shahbaz"۔ DAWN.COM (انگریزی زبان میں)۔ 27 اکتوبر 2015۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 مارچ 2017۔