ابو سیاف

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ابو سیاف
Abu Sayyaf
فلپائن میں مورو تنازع، ملائیشیا پر مورو حملے اور
the دہشت کے خلاف جنگ میں شریک
AQMI Flag asymmetric.svg
ابو سیاف کا سیاہ پرچم
متحرک 1991–تاحال
نظریات اسلام پسندی
اسلامی بنیاد پرستی
سلفی تحریک[1]
رہنماہان Abdurajik Abubakar Janjalani  [2]
Khadaffy Janjalani  [3]
Radullan Sahiron[4][5]
Isnilon Totoni Hapilon[6][7]
Mahmur Japuri [8]
صدر دفتر جولو، سولو، سولو، فلپائن
کاروائیوں کے علاقے فلپائن، ملائیشیا
قوت 300+[9]
حصہ AQMI Flag.svg عراق اور الشام میں اسلامی ریاست
اتحادی 14K Triad[10]
القاعدہ (سابقہ)
مخالفین

Flag of فلپائن حکومت فلپائن[11]

ابو سیاف (Abu Sayyaf) (سنیے : سنیےi/ˌɑːb/ /sɑːˌjɔːf/; عربی: جماعة أبو سياف; Jamāʿah Abū Sayyāf، ASG, فلیپینو: Grupong Abu Sayyaf)[22] فلپائن کے جنوب مغرب میں جولو اور باسیلان میں اور ارد گرد کے علاقوں میں ایک عسکریت پسند گروہ ہے۔ [23]

بیرونی روابط[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Stanford University: "Abu Sayyaf Group" retrieved 17 August 2015
  2. killed, 8 December 1998
  3. Killed, 4 September 2006
  4. rewardsforjustice.net Archived 25 فروری 2013 at the وے بیک مشین
  5. "FBI — RADDULAN SAHIRON"۔ FBI۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 13 نومبر 2014۔
  6. نقص حوالہ: ٹیگ <ref>‎ درست نہیں ہے؛ Abu Sayyaf leader swears oath of loyalty to ISIL نامی حوالہ کے لیے کوئی مواد درج نہیں کیا گیا۔ (مزید معلومات کے لیے معاونت صفحہ دیکھیے)۔
  7. David Von Drehle (26 فروری 2015)۔ "What Comes After the War on ISIS"۔ TIME.com۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 18 جولا‎ئی 2015۔ |archiveurl= اور |archive-url= ایک سے زائد مرتبہ درج ہے (معاونت); |archivedate= اور |archive-date= ایک سے زائد مرتبہ درج ہے (معاونت)
  8. "Abu Sayyaf sub-leader killed in Sulu encounter"۔ InterAksyon.com۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 18 جولا‎ئی 2015۔
  9. "US To Dissolve Anti-Terror Group, JSOTF-P, In Philippines After 10 Years Of Fighting Abu Sayyaf"۔ Sneha Shankar۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2 جنوری 2015۔
  10. Miani 2011, p. 74.
  11. "Abu Sayyaf declared as terrorist organization in Philippines"۔ Iran Daily۔ 10 ستمبر 2015۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 20 نومبر 2015۔
  12. "Australian National Security, Terrorist organisations, Abu Sayyaf Group"۔ Australian Government۔ 12 جولا‎ئی 2013۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 نومبر 2015۔
  13. "Currently listed entities"۔ Public Safety Canada۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 31 مارچ 2016۔
  14. Febrianto (29 مارچ 2016)۔ "Indonesia Tak Boleh Tunduk Terhadap Terorisme Abus Sayyaf!" (Indonesian زبان میں)۔ Rima News۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 مارچ 2016۔
  15. "Hunt down the killers, CM tells Manila"۔ Daily Express۔ 19 نومبر 2015۔ مورخہ 20 نومبر 2015 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 20 نومبر 2015۔
  16. "Proscribed terrorist organisations" (پی‌ڈی‌ایف)۔ Government of the United Kingdom۔ 18 مارچ 2016۔ اخذ شدہ بتاریخ 31 مارچ 2016۔
  17. Joel Locsin (20 جون 2015)۔ "US govt lists NPA, Abu Sayyaf, JI among foreign terrorist organizations in PHL"۔ GMA News۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 20 نومبر 2015۔
  18. "Filipino pirates attack Vietnamese fishermen near Banggi"۔ The Borneo Post۔ Dantri۔ 16 اکتوبر 2014۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 اپریل 2016۔
  19. Stephanie Lee (16 اکتوبر 2014)۔ "Abu Sayyaf suspected of shooting fishing boat"۔ The Star۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 اپریل 2016۔
  20. "3 killed in Abu Sayyaf, MNLF clash in Sulu"۔ Philippines News Agency۔ Sun Star۔ 20 فروری 2016۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 اپریل 2016۔
  21. "3 Abu Sayyaf bandits killed in clash with MILF in Basilan"۔ Philippines News Agency۔ Interaksyon۔ 25 مارچ 2016۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 اپریل 2016۔
  22. Rommel Banlaoi۔ "Al Harakatul Al Islamiyah: Essays on the Abdu Sayyaf Group" (پی‌ڈی‌ایف)۔
  23. Jack Feldman۔ "Abu Sayyaf" (پی‌ڈی‌ایف)۔ Center for Strategic and International Studies۔ اخذ شدہ بتاریخ 16 مئی 2015۔