جلال الدین حقانی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
جلال الدین حقانی
(پشتو میں: جلال الدين حقاني ویکی ڈیٹا پر مقامی زبان میں نام (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
جلال الدین حقانی

معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1939  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پکتیا  ویکی ڈیٹا پر مقام پیدائش (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 3 ستمبر 2018 (78–79 سال)[1]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
صوبہ خوست[2]  ویکی ڈیٹا پر مقام وفات (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وجۂ وفات پارکنسن کی بیماری[2]  ویکی ڈیٹا پر وجۂ وفات (P509) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
طرز وفات طبعی موت[1]  ویکی ڈیٹا پر طرزِ موت (P1196) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Afghanistan (2002–2004).svg افغانستان  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
رکن جلال الدین حقانی گروہ  ویکی ڈیٹا پر رکن (P463) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ عسکری قائد[1]  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان پشتو  ویکی ڈیٹا پر زبانیں (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
الزام
جرم نسل کشی
دہشت گردی
جنگی جرائم
غیر قانونی تجارت منشیات  ویکی ڈیٹا پر جرم (P1399) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عسکری خدمات
وفاداری تحریک الاسلامی طالبان، جلال الدین حقانی گروہ  ویکی ڈیٹا پر وفاداری (P945) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
لڑائیاں اور جنگیں افغانستان میں سوویت جنگ[1]، جنگ افغانستان، شمال مغرب پاکستان میں جنگ  ویکی ڈیٹا پر لڑائی (P607) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

جلال الدین حقانی (انگریزی: Jalaluddin Haqqani)، جلال الدین حقانی گروہ یا حقانی نیٹ ورک کےلیڈر تھے۔جلال الدین حقانی 1939 میں افغان پکتیا صوبے کے ایک گاؤں کاریزگے میں پیدا ہوئے۔ 1964 میں دار العلوم حقانیہ اکوڑہ خٹک سے فارغ التحصیل ہونے کے بعد پشاور میں کچھ عرصہ قیام کیا۔ افغانستان میں داؤد خان کی حکومت کے خلاف سازش میں نام سامنے آنے کے بعد جلاوطنی اختیار کر کے میران شاہ آ گئے اور یہیں سے روسی فوجوں کے خلاف منظم جہاد کا حصہ بنے۔ روس کے خلاف جنگ میں وہ مولوی یونس خالص کی حزب اسلامی میں شامل رہے۔

وفات[ترمیم]

3 ستمبر 2018ء پارکنسن نامی بیماری (جو اعصابی نظام میں ایک طرح کی خرابی کی بیماری ہے) سے وفات پا گئے۔

حوالہ جات[ترمیم]