رضویات

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

رضویات امام احمد رضا خان بریلوی اور بریلوی تحریک کی علمی، فکری، تحقیقی و تصنیفی خدمات کی علمی تحقیق کے لیے استعمال کی جانی والی اصطلاح ہے۔ جب کہ اس کے ماہرین ماہرین رضویات کہلاتے ہیں۔ یہ اصطلاح بطور علم کی فرع، پہلی بار 1989ء میں تحریری طور پر ادارۂ تحقیقات امام احمد رضا، کراچی کی شائع کردہ کتاب آئنیہ رضویات میں وجاہت رسول قادری نے استعمال کی، یہ کتاب ڈاکٹر مسعود احمد نقشبندی کی احمد رضا خان کی 22 کتابوں پر مطبوعہ مقدمات پر مشتمل تھی۔ اس کے بعد 1992ء سے یہ اصطلاع باقاعدہ ماہنامہ معارف رضا (جو اس وقت سالانہ تھا) میں استعمال کی جانی لگی۔ مسعود احمد نقشبندی کے لیے پہلی ماہر رضویات کا خطاب استعمال کیا گیا۔[1]

ماہرین رضویات کی فہرست[ترمیم]

تحقیقی ادارے[ترمیم]

  • رضا اکیڈمی ممبئی
  • رضا اکیڈمی، یو کے
  • رضا اکیڈمی، جنوبی افریقا
  • رضا اکیڈمی، بنگلہ دیش
  • مرکزی مجلس رضا، لاہور
  • المدینہ العلمیہ (شعبہ کتب اعلیٰ حضرت)، کراچی
  • تحقیقات امام احمد رضا، کراچی
  • ادارۂ اہل سنّت کراچی (پاکستان)

جامعاتی تحقیق[ترمیم]

چیئرز[ترمیم]

پی ایچ ڈی[ترمیم]

آپ کی زندگی، دینی خدمات، مکتوبات و تصانیف پر بہت سے اسکالروں نے پی ایچ ڈی کی ہے، جن میں سے چند مندرجہ ذیل ہیں:

  • ڈاکٹر حسن رضا خان، پٹنہ یونیورسٹی، انڈیا، 1979 عنوان : فقیہ اسلام۔
  • ڈاکٹر مسز اوشا سانیال، کولمبیا یونیورسٹی، نیو یارک، 1990 عنوان: برطانوی ہندستان میں عقیدت پر مبنی اسلام اور سیاست (احمد رضا خان بریلوی اور ان کی تحریک) 1870–1920
  • ڈاکٹر سید جمال الدین، ڈاکٹر ہری سنگھ گور یونیورسٹی، ساگر، ایم پی، 1992 عنوان : اعلیٰ حضرت محمد امام احمد رضا خان اور ان کی نعت گوئی۔
  • ڈاکٹر محمد امام الدین جوہر شفیع آبادی، بہار یونیورسٹی، مظفر پور، انڈیا، 1992عنوان: حضرت رضا بریلوی بحیثیت شاعرِ نعت
  • ڈاکٹر طیب رضا، ہندو یونیورسٹی، بنارس، انڈیا، 1993عنوان: امام احمد رضا خان حیات و کارنامے۔
  • ڈاکٹر مجید اللہ قادری، جامعہ کراچی، پاکستان، 1993، عنوان: کنز الایمان اور دیگر معروف اردو تراجم کا تقابلی جائزہ۔
  • ڈاکٹر حافظ الباری صدیقی، سندھ یونیورسٹی، جامشورو، پاکستان، 1993، عنوان: امام احمد رضا بریلوی کے حالات افکار اور اصلاحی کارنامے (سندھی)۔
  • ڈاکٹر عبد النعیم عزیزی، روہیل کھنڈ یونیورسٹی، بریلی، انڈیا، 1994، عنوان: اردو نعت گوئی اور فاضل بریلوی۔
  • ڈاکٹر سراج احمد بستوی، کانپور یونیورسٹی، انڈیا، 1995، عنوان: مولانا احمد رضا خان بریلوی کی نعتیہ شاعری۔
  • ڈاکٹر مولانا امجد رضا قادری، ویر کنور سنگھ یونیورسٹی، آرہ، بہار، انڈیا1998، عنوان: امام احمد رضا کی فکری تنقیدیں۔
  • پروفیسر ڈاکٹر محمد انور خان، سندھ یونیورسٹی، جامشورو، پاکستان، 1998، عنوان: مولانا احمد رضا بریلوی کی فقہی خدمات۔
  • ڈاکٹر غلام مصطفٰی نجم القادری، میسور یونیورسٹی، انڈیا، 2002، عنوان: امام احمد رضا کا تصورِ عشق۔
  • ڈاکٹر رضا الرحمٰن عاکف سنبھلی، روہیل کھنڈ یونیورسٹی، بریلی، انڈیا، 2003، عنوان: روہیل کھنڈ کے نثری ارتقا میں مولانا امام احمد رضا خان کا حصہ۔
  • ڈاکٹر غلام غوث قادری، رانچی یونیورسٹی، انڈیا، 2003، عنوان: امام احمد رضا کی انشاء پردازی
  • مسز ڈاکٹر تنظیم الفردوس، جامعہ کراچی، پاکستان2004، عنوان: مولانا احمد رضا خان کی نعتیہ شاعری کا تاریخی اور ادبی جائزہ۔
  • ڈاکٹر سید شاہد علی نورانی، پنجاب یونیورسٹی، لاہور، پاکستان، 2004، عنوان: الشیخ احمد رضا شاعر اربیا مع تدوین دیوانہ العربی۔
  • ڈاکٹر غلام جابر شمس مصباحی، بی آر امبیڑکر یونیورسٹی، مظفر پور، انڈیا، 2004، عنوان: امام احمد رضا اور ان کے مکتوبات۔

ایم فل[ترمیم]

رسائل و جرائد[ترمیم]

  • ماہنامہ جہاں رضا، لاہور
  • ماہنامہ معارف رضا، کراچی
  • ماہنامہ اعلیٰ حضرت، بریلی
  • سہ ماہی رضا بک ریو
  • سہ ماہی افکار رضا، ممبئی
  • سالنامہ معارف رضا، عربی، فارسی، انگریزی اور اردو (الگ الگ)
  • سالنامہ یادگار اعلیٰ حضرت
  • سالنامہ امام احمد رضا

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. مرتبین۔ رضویات نئے تحقیقی تناظر میں۔ کراچی: ادارۂ تحقیقات امام احمد رضا۔ صفحہ 24، 25۔