جے رام ٹھاکر

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
جے رام ٹھاکر
JRThakur.jpg 

مناصب
وزیر اعلیٰ ہماچل پردیش (6 )   خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں منصب (P39) ویکی ڈیٹا پر
آغاز منصب
27 دسمبر 2017 
Fleche-defaut-droite-gris-32.png ویربھدر سنگھ 
  Fleche-defaut-gauche-gris-32.png
معلومات شخصیت
پیدائش 6 جنوری 1965 (54 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
منڈی ضلع  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
شہریت Flag of India.svg بھارت  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں سیاسی جماعت کی رکنیت (P102) ویکی ڈیٹا پر
عملی زندگی
پیشہ سیاست دان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر

جے رام ٹھاکر (انگریزی: जय राम ठाकुर) ایک بھارتی سیاست دان جو 27 دسمبر 2017ء سے ہماچل پردیش کے وزیر اعلیٰ ہیں۔ نومبر 2017ء کے اسمبلی انتخابات میں وزارت اعلیٰ کے ایک دوسرے بی جے پی امیدوار پریم کمار دھومل کو شکست دینے کے بعد وہ 24 دسمبر 2017ء کو بی جے پی قانون ساز جماعت کے لیڈر منتخب ہوئے تھے۔ وہ سنہ 1998ء سے ہماچل پردیش کی قانون ساز اسمبلی کے رکن ہیں اور ہماچل پردیش کی بی جے پی حکومت میں کابینہ کے وزیر رہ چکے ہیں۔ وہ سنہ 2009ء سے سنہ 2012ء تک وزیر دیہی ترقی و پنچایتی راج تھے۔ وہ سَراج حلقے سے ہماچل پردیش اسمبلی کے رکن منتخب ہوئے تھے۔ وہ پہلی بار سنہ 1998ء میں اسمبلی کے رکن منتخب ہوئے تھے۔[1]

ولبھ گورنمنٹ کالج منڈی میں دوران تعلیم ہی انہوں نے سیاست میں قدم رکھا اور اکھل بھارتیہ ودیارتھی پریشد (اے بی وی پی) میں شامل ہو گئے اور پہلے الیکشن بھی اسی جماعت کے جھنڈے تلے جیتا۔ طلبہ تنظیم کے ساتھ وہ لمبے عرصے تک جڑے رہے۔ سنہ 1986ء میں اکھل بھارتیہ ودیارتھی پریشد کے جوائنٹ سیکریٹری، ریاست بنے۔ 1989ء سے 1993ء تک اے بی وی پی (جموں و کشمیر) کے آرگنائزنگ سیکریٹری، 1993ء سے 1995ء تک بھارتیہ جنتا پارٹی یوا مورچہ کے ریاستی سیکریٹری، 2002ء سے 2003ء تک بھارتیہ جنتا پارٹی یوا مورچہ و بی جے پی ضلع منڈی کے صدر، 2003ء سے 2005ء تک بی جے پی کے ریاستی نائب صدر اور 2006ء سے 2009ء تک بھارتیہ جنتا پارٹی کے ریاستی صدر رہے۔[2]

ابتدائی زندگی اور تعلیم[ترمیم]

وہ منڈی کے علاقے تُھنگ کے گاؤں تندی کے ایک غریب راجپوت کسان خاندان پیدا ہوئے تھے۔[3] جے رام ٹھاکر پانچ بہن بھائیوں میں چوتھے نمبر تھے، ان کی دو بہنیں اور تین بھائی تھے۔[4] ان والد کا نام جیتھو رام اور والدہ کا نام بریکو دیوی تھا۔[5] جے رام نے ابتدائی تعلیم کُرنی اسکول سے حاصل کی۔[5] اور گورنمنٹ سینئر سیکنڈری اسکول بگسیاد سے تعلیم حاصل کی اور بعد میں اپنا بی اے منڈی کے ولبھ گورنمنٹ کالج سے کیا۔ انہوں نے ایم اے چندی گڑھ کی پنجاب یونیورسٹی سے مکمل کیا۔

نجی زندگی[ترمیم]

جے رام ٹھاکر نے اکھل بھارتیہ ودیارتھی پریشد کی ساتھی سادھنا ٹھاکر سے شادی کی تھی اور ان کی دو بیٹیاں ہیں۔ سادھنا ایک ڈاکٹر ہیں اور ان کی پیدائش جے پور کے ایک کناڈیگا (کنڑ) خاندان میں ہوئی تھی۔ ان کی دونوں بیٹیاں ہماچل پردیش کے میڈیکل کالج میں زیر تعلیم ہیں۔[6]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Who is Jairam Thakur – front runner for Himachal Pradesh CM post after Prem Kumar Dhumal's shock defeat"۔ دی فنانشیل ایکسپریس (امریکی انگریزی زبان میں)۔ 2017-12-19۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2017-12-23۔
  2. "Personal Information-Himachal Pradesh Vidhan Sabha"۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 24 دسمبر 2017۔
  3. "Jai Ram Thakur, the Next Chief Minister of Himachal Pradesh"۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 24 دسمبر 2017۔
  4. "Jai Ram Thakur: The rise and rise of Himachal Pradesh's new CM-elect in BJP"۔ دی فنانشیل ایکسپریس (امریکی انگریزی زبان میں)۔ 2017-12-19۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2017-12-24۔
  5. ^ ا ب "Shri Jai Ram Thakur"۔ اخذ شدہ بتاریخ 20 جنوری 2018۔
  6. "Himachal Pradesh CM Jai Ram Thakur married Karnataka girl"۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔