لال بہادر شاستری

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

غ

لال بہادر شاستری
Lal Bahadur Shastri
लाल बहादुर शास्त्री
Lal Bahadur Shastri
لال بہادر شاستری
دوسرے وزیراعظم بھارت
عہدہ سنبھالا
9 جون 1964ء – 11 جنوری 1966ء
صدر سروے پلی رادھاکرشنن
پیشرو گلزاری لال نندا
جانشین گلزاری لال نندا
وزیر برائے امور خارجہ
عہدہ سنبھالا
9 جون 1964ء – 18 جولائی 1964ء
پیشرو گلزاری لال نندا
جانشین Sardar Swaran Singh
وزیر داضلہ
عہدہ سنبھالا
4 اپریل 1961 – 29 اگست 1963
وزیر اعظم جواہر لعل نہرو
پیشرو گووند ولبھ پنت
جانشین گلزاری لال نندا
ذاتی تفصیلات
پیدائش لال بہادر شریواستو
2 اکتوبر 1904 (1904-10-02)
مغل سرائے وارانسی، متحدہ صوبے، برطانوی راج
(اب اتر پردیش، بھارت)
وفات 11 جنوری 1966 (عمر 61 سال)
تاشقند، ازبک سوویت اشتراکی جمہوریہ، سوویت اتحاد
(اب ازبکستان)
سیاسی جماعت انڈین نیشنل کانگریس
شریک حیات للیتا دیوی
رہائش نئی دہلی
مادر علمی Gandhi Kashi Vidyapeeth
پیشہ الکلیات
فعالیت پسندی
مذہب ہندومت
اعزازات بھارت رتن 1966 (پس مرگ)

لال بہادر شاستری (2 اکتوبر، 1904ء - 11 جنوری، 1966ءبھارت کے تیسرے اور مجموعی طور پر دوسرے مستقل وزیر اعظم تھے. وہ 1963ء-1965ء کے درمیان بھارت کے وزیر خارجہ تھے۔ان کی پیدائش مغل سرائے ، اتر پردیش میں ہوئی۔ لال بہادر شاستری کی پیدائش 1904ء میں مغل سرائے، اتر پردیش میں لال بہادر شریواستو کے طور پر ہوئی تھی۔ ان کے والد شاردا پرساد ایک غریب استاد تھے، جو بعد میں محکمہ مال کے دفتر میں کلرک بنے۔ بھارت کی آزادی کے بعد لال بہادر شاستری کو اتر پردیش کے پارلیمانی سیکریٹری کے طور پر مقرر کیا گیا تھا۔ وہ گووند بلبھ پت کے صوبائی حکومت کے دور میں مشیر اور ٹریفک وزیر بنے۔ ان کے مشورے پر بھارت میں پہلی بار بھیڑ کو قابو میں رکھنے کے لئے لاٹھی کے جگہ پانی کی بوچھاڑ کا استعمال شروع کیا۔ 1951ء میں، جواہر لال نہرو کی قیادت میں وہ کل بھارت کانگریس کمیٹی کے جنرل سیکریٹری مقرر کئے گئے۔ انہوں نے 1952ء، 1957ء اور 1962ء کے انتخابات میں کانگریسی جماعت کو بھاری اکثریت سے جتوانے کے لئے بہت سخت محنت کی۔ جواہر لال نہرو کا ان کے وزیر اعظم کی مدت کے دوران 27 مئی، 1964ء کو انتقال ہو جانے کے بعد، لال بہادر شاستری نے 9 جون 1964ء کو وزیراعظم کا عہدہ قبول کیا۔

حوالہ جات[ترمیم]