تفتازانی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

تفتازانی (ولادت 712ھ -1312ء = وفات 793ھ1390ء)

نام[ترمیم]

نام مسعود بن عمر بن عبد الله تفتازانى، لقب سعد الدين:علم بیان میں عربی لغت اور منطق کے امام تصور کئے جاتے ہیں فقیہ اور اصولی تھےاس کے علاوہ آپ مفسر متکلم محدث اور ادیب بھی تھےبعض کے نزدیک حنفی تھے اور خیال یہ ہے کہ شافعی تھے

ولادت[ترمیم]

انکی پیدائش تفتازان جو بلاد خراسان میں سے ہے جبکہ اقامت سرخس میں رہی انہیں تيمورلنگ نے سمرقند،روانہ کر دیا وہاں پر وفات ہوئی اور سرخس میں دفن ہوئے ان کی زبان مین لکنت تھی[1]

تصنیفات[ترمیم]

بہت سی تصنیفات ہیں جن میں سے چند ایک یہ ہیں

  • تہذيب المنطق -
  • المطول - بلاغت میں لکھی ہے
  • المختصر - یہ اختصار ہے شرح تلخيص المفتاح کی
  • مقاصد الطالبين - علم الكلام میں ہے
  • شرح مقاصد الطالبين -
  • النعم السوابغ -
  • شرح الكلم النوابغ للزمخشري
  • ارشاد الہادى - نحو کی کتاب
  • شرح العقائد النسفیہ-
  • حاشیہ على شرح العضد على مختصر ابن الحاجب - اصول کی کتاب
  • التلويح الى كشف غوامض التنقيح -
  • شرح التصريف العزي -صرف کی کتاب ہے یہ انکی سب سے پہلی کتاب ہےجب 16 سال کے تھے
  • شرح الشمسیہ - منطق کی کتاب
  • حاشیہ الكشاف -
  • شرح اربعين النوویہ-[2]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. موسوعہ فقہیہ ،جلد اول صفحہ 455، وزارت اوقاف کویت، اسلامک فقہ اکیڈمی انڈیا
  2. الاعلام للزركلی