محمد اول

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
محمد اول
Mehmed I
سلطان سلطنت عثمانیہ
Mehmed I.jpg
محمد اول
دور حکومت 5جولائی، 1413 – مئی 26, 1421
پیشرو عثمانی زمانہ تعطل (بایزید اول)
جانشین مراد دوم
سلطان سلطنت عثمانیہ
ملکہ شہزادہ خاتون
کومرو خاتون
امینہ خاتون
شاہی خاندان عثمانی خاندان
والد بایزید اول
والدہ دولت خاتون
پیدائش 1381
بورصہ، ترکی
وفات 26 مئی، 1421 (عمر 40)
بورصہ، ترکی
تدفین جامع مسجد اولو، بورصہ، ترکی
مذہب اسلام
طغرا
محمد اول کا مقبرہ

محمد اول (مکمل نام: محمد اول چلبی) (پیدائش: 1389ء، انتقال 26 مئی 1421ء) سلطنت عثمانیہ کے سلطان اور دوسرے بانی تھے۔ وہ بایزید اول کے صاحبزادے تھے۔

جنگ انقرہ میں بایزید یلدرم کی امیر تیمور کے ہاتھوں شکست اور سلطنت عثمانیہ کے ٹکڑوں میں تقسیم ہونے کے بعد محمد اول نے ادرنہ (ایڈریانوپل) میں تخت سنبھالا اور دارالحکومت بروصہ سے ادرنہ منتقل کرکے سلطنت کو ختم ہونے سے بچایا اور بغاوتوں کو فرو کرنے کے ساتھ ساتھ البانیہ سمیت کئی علاقے فتح کرکے سلطنت میں شامل کئے۔

محمد اول کی عمر انتقال کے وقت محض 40 سال تھی اور انہوں نے صرف 8 سال حکومت کی تاہم ان کا دور اس لئے اہم ہے کہ جنگ انقرہ میں اپنے والد کی شکست اور سلطنت کے ٹکڑے ہوجانے کے بعد انہوں نے اسے از سر نو پیروں پر کھڑا کیا اور سلطنت کے دوسرے بانی کہلائے۔ ان کا مزار بروصہ میں مسجد سبز کے ساتھ واقع ہے۔

محمد اول
پیدائش: 1381 وفات: مئی 26, 1421
شاہی القاب
پیشرو
بایزید اول
سلطان سلطنت عثمانیہ
5 جولائی، 1413 – مئی 26, 1421
جانشین
مراد دوم