رہبانیت

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

رہبانیت (انگریزی: Monasticism) وہ نظریہ جو جسم کو شر سے بھرا ہوا اور ناپاک اور روح کو مقدس قرار دیتا ہے۔ اس نظریے کی رو سے انسان کو اپنی جسمانی ضروریات، خواہشات اور تقاضوں کو زیادہ سے زیادہ کچل کر روحانی بالیدگی حاصل کرنی چاہیے۔ یہ نقطہ نظر قدیم زمانے میں بیشتر مذاہب، خاص طور پر مسیحیت اور بدھ مت سے متعلق رہا ہے۔ اسلام اس کو ناپسند کرتا ہے۔ اس کے متعلق قرآن پاک میں خدا تعالٰیٰ نے فرمایا ہے کہ ہم نے اس کا حکم نہیں دیا۔ بلکہ لوگوں نے خود اس کو اختیار کر لیا ہے۔ محمد صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کا ارشار ہے کہ اسلام میں کوئی رہبانیت نہیں ہے۔[1][2]


مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. قرطبی، الجامع لاحکام القرآن، 18 : 87
  2. فتح الباری، 9 : 111