سیکولرازم

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
برطانوی اصطلاح سیکولرزم کا خالق جارج جیکب ہولیوک (1817–1906)

سیکولرازم سے مراد دنیاوی امور سے مذہب اور مذہبی تصورات کا اخراج یا بے دخلی ہے،[1] یعنی یہ نظریہ کہ مذہب اور مذہبی خیالات و تصورات کو ارادتاً دنیاوی امور سے علاحدہ کر دیا جائے۔[2] سیکولرازم جدید دور میں روایتی مذہبی اقدار سے دور جانے کی ایک تحریک ہے۔[3] سیکولرازم کو اُردو میں عموماً لادینیت یا نامذہبیت سے تعبیر کیا جاتا ہے۔ سیکولرازم کے حامیوں کے نزدیک یہ لادینیت کے مترادف نہیں، بلکہ اس کا مطلب یہ ہے کہ مذہب اور ریاست کے معاملات کو الگ الگ کر دیا جائے۔ سب سے پہلے اصطلاح سیکولرازم کو ایک برطانوی مصنف جارج جیکوب ہولیاک نے 1851ء میں استعمال کیا تھا،[4] یہ اصطلاح دراصل چرچ اور ریاست کو الگ کرنے کے لیے استعمال کی گئی تھی، گویا سیکولرازم دراصل سیاست اور مذہب کے مابین تفریق کا نام ہے۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ویبسٹر ڈکشنری
  2. اوکسفرڈ ڈکشنری
  3. فرانسیسی سیکولر اصطلاح Laïcité کے مطابق
  4. Holyoake, G.J. (1896). The Origin and Nature of Secularism, London: Watts and Co. p.51