شیو مت

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
شیو جو شیو دھرم کا اولین الٰہ ہے۔

شیو مت (ہندی: शैव) یا شیو پنتھ ہندومت کے بڑے فرقوں میں سے ایک ہے جو شیو کو حاکم مطلق کی حیثیت سے پوجتے ہیں۔[1][2][3] شیو بھگت شیو پرست یا شیوی کہلاتے ہیں۔ آج ہندومت میں شیو مت کے کئی طبقے ہیں سب ویدوں اور مخصوص شیوی کتب سے مقدس صحائف کی طرح عقیدت رکھتے ہیں۔ اُن کا فلسفیانہ نظریہ یہ ہے کہ شیو حقیقت مطلق ہے وہ تخلیق کرنے والا، زندگی اور موت دینے والا دیوتا ہے۔ بنی نوع انسان کو جہالت، کرم اور التباس کے سبب شیو کو الگ سمجھا جاتا ہے۔ شیو سے تعلق بنانے کی خاطر لوگوں کو اُس کے بتائے ہوئے راستے کی پیروی اور اس کی پیروی کرنی چاہیے اور اس کے مندر میں اس کے حضور پیش ہوں۔ انہیں گرو کی زیر ہدایت مطالعہ اور مراقبہ کرنا چاہیے۔ بعض شیو پرستوں کی نظر میں خصوصی منتر دوہرانا ضروری ہے۔ یہ تمام افعال شیو اور پوجا کرنے والے کے مابین اتحاد قائم کرتے ہیں اور قطعی نتیجہ موکش (نجات) ہوتا ہے۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Iconography of Śiva in Pahāṛī Paintings۔ Mittal Publications۔ 1987۔ صفحات 59–60, 88۔ آئی ایس بی این 978-81-7099-016-1۔ 
  2. Stella Kramrisch (1981)۔ The Presence of Śiva۔ Princeton, New Jersey: Princeton University Press۔ صفحات 187–188۔ آئی ایس بی این 978-8120804913۔ 
  3. Shaivism, Oxford University Press