ہریش چندر مکھرجی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ہریش چندر مکھرجی
(بنگالی میں: হরিশ্চন্দ্র মুখোপাধ্যায় خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقامی زبان میں نام (P1559) ویکی ڈیٹا پر
معلومات شخصیت
پیدائش اپریل 1824ء
کولکاتا  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
وفات جون 16، 1861(1861-60-16) (عمر  37 سال)
کولکاتا  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام وفات (P20) ویکی ڈیٹا پر
قومیت بھارتی
نسل بنگالی ہندو
مذہب ہندو مت
عملی زندگی
پیشہ صحافی

ہریش چندر مکھرجی (بنگالی: হরিশ্চন্দ্র মুখোপাধ্যায়)‏(1824ء – 1861ء) ایک ہندوستانی صحافی، ہندو پیٹریاٹ کے مالک و مدیر اور محب وطن تھے جنہوں نے انڈگو کاشتکاروں کا زبردست دفاع کیا اور حکومت کو تبدیلیاں متعارف کرانے پر مجبور کیا۔[1]

ابتدائی زندگی[ترمیم]

ہریش چندر کے والد کا نام رام دھان مکھرجی تھا، ان کا آبائی وطن پورب بردھمان ضلع میں واقع سری دھار پور تھا لیکن انہوں نے اپنے ماموں کے یہاں بھوانی پور، کلکتہ میں پرورش پائی۔ اس وقت کی روایت کے بموجب ان کے والد کی تین بیویاں تھیں۔ ہریش چندر مکھرجی تیسری بیوی رکمنی دیوی سے تھے۔ وہ یونین اسکول کے طالب علم تھے لیکن غربت کی وجہ سے تعلیمی سلسلہ جاری نہ رکھ سکے۔ بعد ازاں انہوں نے ایک چھوٹی سی کمپنی میں کام کرنا شروع کیا تاہم کچھ عرصے بعد مسابقاتی امتحان کے ذریعہ انہیں فوجی محاسب عام (ملٹری آڈیٹر جنرل) کے دفتر میں منشی کی ملازمت مل گئی جہاں وہ آہستہ آہستہ ترقی کرتے رہے اور بالآخر یہیں سے وظیفہ یاب ہوئے۔[2]

ہندو پیٹریاٹ[ترمیم]

ہریش چندر نے نجی طور پر علم حاصل کیا تھا اور خصوصاً تاریخ، سیاسیات، قانون اور انگریزی زبان میں اعلی استعداد حاصل کر لی تھی۔ وہ اپنے مضامین میں حکومت پر سخت تنقیدیں کرتے۔ ہریش چندر ہندو پیٹریاٹ کی ابتدا یعنی 1853ء ہی سے منسلک رہے۔ سنہ 1855ء میں وہ اس کے مالک اور مدیر بن گئے۔ اس میں سمبوناتھ پنڈت قانونی امور پر مضامین لکھا کرتے تھے۔

وفات[ترمیم]

ہریش چندر نے 14 جون 1861ء کو وفات پائی۔ چونکہ انہوں نے معاشرے کی ترقی کے لیے اپنا سب کچھ قربان کر دیا تھا اس لیے ترکہ میں انہوں نے محض اپنا گھر اور ہندو پیٹریاٹ پریس چھوڑے۔ نیل کاشتکاروں پر مظالم کے خلاف ہندو پیٹریاٹ میں انہوں نے ایک رپورٹ شائع کی تھی، جس پر ان کے خلاف مقدمہ دائر کر دیا گیا۔ اسی مقدمے کے دوران میں ان کا گھر بھی نیلامی پر چڑھ گیا۔ چنانچہ گریش چندر گھوش نے قوم سے درخواست کی وہ ہریش چندر کا گھر بچالیں، اس موقع پر کالی پرسن سنگھ اور دیگر افراد نے سرمایہ فراہم کیا اور یوں گھر نیلام ہونے سے بچ گیا۔

بیرونی روابط[ترمیم]

  • Nurul Hossain Choudhury۔ "Mukherjee, Harishchandra"۔ بہ Sirajul Islam؛ Ahmed A. Jamal۔ Banglapedia: National Encyclopedia of Bangladesh۔ Asiatic Society of Bangladesh۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Sengupta, Subodh Chandra and Bose, Anjali (editors), 1976/1998, Sansad Bangali Charitabhidhan (Biographical dictionary) Vol I, (بنگالی زبان میں), p621, ISBN 81-85626-65-0
  2. Sastri, Sivanath, Ramtanu Lahiri O Tatkalin Banga Samaj, (بنگالی زبان میں)1903/2001, pp129-130, New Age Publishers Pvt. Ltd.