وفد السباع

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

السباع کا معنی ہے درندے اس وفد میں بھیڑیوں کا ذکر ہے اس لیے اسے وفد السباع کہا جاتا ہے
شمر بن عطیہ بیان کرتے ہیں کہ مزینہ قبیلے یا جہینہ قبیلے سے تعلق رکھنے والے ایک صحابی بیان کرتے ہیں نبی اکرم صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم نے فجر کی نماز ادا کی اس وقت وہاں سو بھیڑئیے موجود تھے جنہوں نے اپنے نمائندوں کے طور پر کچھ بھیڑیوں کو بھیجا تھا نبی صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم نے لوگوں سے ارشاد فرمایا تم اپنے کھانے میں سے انہیں کچھ کھانے کو دے دیا کرو تم ان کے حملے سے محفوظ رہوگے۔ ان بھیڑیوں نے نبی صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم سے اپنی ضرورت کی درخواست پیش کی تھی تو نبی اکرم صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم نے ان کی وہ ضرورت پوری کردی راوی کا بیان ہے کہ جب نبی صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم نے ان کی ضرورت پوری کردی تو وہ بھیڑئیے آوازیں نکالتے ہوئے چلے گئے۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. سنن دارمی:جلد اول:حدیث نمبر 22