وفد بنو کلاب

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

وفد بنو کلاب سنہ میں بارگاہ رسالت میں حاضر ہوا
بنو کلاب کے 13 آدمیوں کا ایک وفدجس میں لبید بن ربیعہ اور جبار بن سلمیٰ بھی تھے رسول اللہ صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم نے ان لوگوں کو رملہ بنت حارث کے مکان میں اتارا، جبار اور کعب بن مالک میں دوستی تھی کعب ان کو خوش آمدید کہنے گئے اور پھر ساتھ لے کر رسول اللہ صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کی بارگاہ میں پہنچے وہاں پر اسلامی طریقے سے سلام کیا، اس کے بعد عرض کیا کہ ضحاک بن سفیان ہمارے پاس کتاب اللہ اور آپ کی وہ سنت لائے ہیں جس کا آپ نے انہیں حکم دیا تھا۔ انہوں نے ہمیں اللہ کی طرف دعوت دی، ہم نے اسے اللہ اور رسول کے لیے قبول کر لیا انہوں نے ہمارے امرا سے زکوۃ وصول کی اور غرباء کو واپس کر دی۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. طبقات ابن سعد، حصہ دوم، صفحہ53، محمد بن سعد، نفیس اکیڈمی کراچی