ابو شکور بلخی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ابو شکور بلخی
معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 915  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بلخ[1]  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
تاریخ وفات 10ویں صدی  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت دولت سامانیہ  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ شاعر  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان فارسی  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شعبۂ عمل شاعری  ویکی ڈیٹا پر (P101) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

ابو شکور بلخی ( فارسی: ابوشکور بلخی‎ ) (پیدائش 915 ء) دسویں صدی میں بلخ سے شروع ہوئی سامانی سلطنت کا ایک فارسی شاعر تھا ۔

وہ رودگی کا ہم عصر تھا اور اس نے تین مثنویاں لکھیں ، آفرین نامہ (944 میں لکھا گیا) ان میں سے ایک تھا۔ ان کی اشعار میں سے صرف 192 باقی ہیں۔

حوالہ جات[ترمیم]

  • ای جی براؤن فارس کی ادبی تاریخ ۔ (چار جلدیں ، 2،256 صفحات اور تحریر میں پچیس سال) 1998۔ آئی ایس بی این 0-7007-0406-X
  • جان رائپکا ، ایرانی ادب کی تاریخ ۔ ریڈیل پبلشنگ کمپنی۔ ASIN B-000-6BXVT-K

مذید دیکھو[ترمیم]