فیودر دوستوئیفسکی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
فیودر دوستوئیفسکی
(روسی میں: Фёдор Михайлович Достоевский ویکی ڈیٹا پر مقامی زبان میں نام (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
Vasily Perov - Портрет Ф.М.Достоевского - Google Art Project.jpg 

معلومات شخصیت
پیدائش 30 اکتوبر 1821[1][2][3]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ماسکو[4][5][6][7]  ویکی ڈیٹا پر مقام پیدائش (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 28 جنوری 1881 (60 سال)[8][9][10][11][12][13][14]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
سینٹ پیٹرز برگ[4][5][15][16][7][17]  ویکی ڈیٹا پر مقام وفات (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وجۂ وفات مرگی، نفخ  ویکی ڈیٹا پر وجۂ وفات (P509) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Russia.svg سلطنت روس  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
رکن روس کی اکادمی برائے سائنس  ویکی ڈیٹا پر رکن (P463) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عارضہ مرگی  ویکی ڈیٹا پر بیماری (P1050) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ مترجم، شاعر، ناول نگار، مضمون نگار، افسانہ نگار، صحافی، فلسفی[18][19][20]، سوانح نگار، مصنف  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مادری زبان روسی  ویکی ڈیٹا پر مادری زبان (P103) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان روسی[21]  ویکی ڈیٹا پر زبانیں (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ملازمت روس کی اکادمی برائے سائنس  ویکی ڈیٹا پر نوکری (P108) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
کارہائے نمایاں جرم و سزا  ویکی ڈیٹا پر کارہائے نمایاں (P800) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مؤثر الیگزیندر پشکن، بیلنسکی، ایڈم میکیوچز، امانوئل کانٹ، ولیم شیکسپیئر، بالزاک، مائیگل ڈی سروانٹیز، چارلس ڈکنز، وکٹر ہیوگو، ایڈ گرایلن پو  ویکی ڈیٹا پر مؤثر (P737) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عسکری خدمات
وفاداری سلطنت روس  ویکی ڈیٹا پر وفاداری (P945) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
دستخط
Fyodor Dostoyevsky Signature.svg 
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحہ  ویکی ڈیٹا پر آئی ایم ڈی بی - آئی ڈی (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

فیودرمیخائیلووچ دوستوئیفسکی روسی: Фёдор Миха́йлович Достое́вский, نقل حرفی Fyodor Mikhailovich Dostoyevsky (پیدائش: 11 نومبر 1821ء - وفات: 9 فروری 1881ء) روس کے نامور ناول نگار، افسانہ نگار اور فلسفی ہیں جن کی تخلیقات سے دنیائے ادب وفلسفہ کے بڑے بڑے نام متاثرنظر آتے ہیں۔

حالاتِ زندگی و تعلیم[ترمیم]

فیودر دوستوئیفسکی ماسکو، روسی سلطنت میں 11 نومبر 1821ء کو پیدا ہوئے۔۔[22] ماسکو یونیورسٹی اور پیٹرز برگ کی ملٹری انجنیئرنگ اکیڈمی میں تعلیم پائی۔ 1843ء میں گریجویٹ بننے کے بعد سب لفٹننیٹ کے عہدے پر مامور ہوا۔ 1844ء میں اپنے والد کی وفات کے بعد مستعفی ہو کر زندگی ادب کے لیے وقف کر دی۔ زندگی بھر انتہائی غربت اور مرگی کی شدید بیماری کا سامنا کرنا پڑا۔ 1849ء میں سازش کے الزام میں پھانسی کی سزا ملی لیکن تختہ دار پر اس کی یہ سزا گھٹا کر سائبیریا میں چار سال کی جلاوطنی اور جبری فوجی خدمت میں تبدیل کر دی گئی[23]

تخلیقی دور[ترمیم]

1846ء میں پہلی کہانی "بے چارے لوگ" شائع ہوئی۔ 1847ء میں روس کی انقلابی انجمن میں شریک ہوا۔ بدترین مجرموں کے ساتھ رہنے کے باعث اس نے روسی زندگی کے تاریک پہلوؤں اور نچلے طبقوں کے مصائب کی خوب عکاسی کی ہے۔ اس کا مشہور ناول جرم و سزا ہے۔ 1865ء کے بعد اخبار نویسی کا پیشہ اختیار کیا۔ کچھ عرصہ رسالہ روسی دنیا کا ایڈیٹر رہا، 1876ء میں ایک رسالہ کارنیٹ نکالا جس میں تازہ کتابوں پر تبصرے چھپتے تھے۔ ناولوں میں نفسیاتی تجزیہ اور تحت الشعور کی موشگافی اس کی خصوصیات ہیں۔

تخلیقات[ترمیم]

وفات[ترمیم]

دنیائے ادب کے لازوال ناول نگار اور ناول نگاری کے فن کو جِلا بخشنے والے مصنف سینٹ پیٹرز برگ، روسی سلطنت میں 9 فروری 1881ء میں انتقال کر گئے[23]۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. مکمل کام یہاں دستیاب ہے: http://feb-web.ru/feb/kle/ — عنوان : Краткая литературная энциклопедия — ناشر: Great Russian Entsiklopedia, JSC — اقتباس: 30.X(11.XI).1821
  2. مکمل کام یہاں دستیاب ہے: http://feb-web.ru/feb/kle/ — مصنف: Aleksandr Kirpichnikov — عنوان : Достоевский, Федор Михайлович — شائع شدہ از: Brockhaus and Efron Encyclopedic Dictionary. Volume XI, 1893
  3. مکمل کام یہاں دستیاب ہے: http://feb-web.ru/feb/kle/ — مصنف: Thomas Seccombe — عنوان : Dostoievsky, Feodor Mikhailovich — شائع شدہ از: دائرۃ المعارف بریطانیکا 1911ء
  4. ^ ا ب مصنف: A. K. Borozdin — عنوان : Достоевский, Федор Михайлович — شائع شدہ از: Russian Biographical Dictionary, Volume 6
  5. ^ ا ب وصلة : https://d-nb.info/gnd/118527053  — اخذ شدہ بتاریخ: 17 فروری 2017 — اجازت نامہ: CC0
  6. http://www.theguardian.com/books/2008/jun/11/fyodordostoevsky
  7. ^ ا ب مکمل کام یہاں دستیاب ہے: http://feb-web.ru/feb/kle/ — عنوان : Краткая литературная энциклопедия — ناشر: Great Russian Entsiklopedia, JSC
  8. مصنف: Aleksandr Kirpichnikov — عنوان : Достоевский, Федор Михайлович — شائع شدہ از: Brockhaus and Efron Encyclopedic Dictionary. Volume XI, 1893 — اقتباس: 29 января он обещал участвовать в Пушкинском вечере, но 28 января [1881 года] к вечеру его уже не было в живых.
  9. مکمل کام یہاں دستیاب ہے: http://feb-web.ru/feb/kle/ — عنوان : Краткая литературная энциклопедия — ناشر: Great Russian Entsiklopedia, JSC — اقتباس: 28.I(9.II).1881
  10. Fjodor Dostojewski
  11. BD Gest' author ID: https://www.bedetheque.com/auteur-20026-BD-.html — بنام: Fédor Mikhaïlovitch Dostoïevski — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  12. Brockhaus Enzyklopädie online ID: https://brockhaus.de/ecs/enzy/article/dostojewski-fjodor-michailowitsch — بنام: Fjodor Michailowitsch Dostojewski — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  13. Store norske leksikon ID: https://snl.no/Fjodor_Dostojevskij — بنام: Fjodor Dostojevskij — عنوان : Store norske leksikon
  14. ISFDB author ID: http://www.isfdb.org/cgi-bin/ea.cgi?34771 — بنام: Фёдор Достоевский
  15. http://www.sciencedirect.com/science/article/pii/0304347981900478
  16. http://www.jstor.org/stable/40922230
  17. مکمل کام یہاں دستیاب ہے: http://feb-web.ru/feb/kle/ — مصنف: Thomas Seccombe — عنوان : Dostoievsky, Feodor Mikhailovich — شائع شدہ از: دائرۃ المعارف بریطانیکا 1911ء
  18. http://muse.jhu.edu/journals/journal_of_the_history_of_philosophy/summary/v041/41.4raymond.html
  19. http://muse.jhu.edu/journals/journal_of_the_history_of_philosophy/v041/41.4raymond.html
  20. https://muse.jhu.edu/journals/journal_of_the_history_of_philosophy/v041/41.4raymond.pdf
  21. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb11900477j — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  22. Fyodor Dostoyevsky - Author - Biography
  23. ^ ا ب Fyodor Dostoevsky - Biography and Works. Search Texts, Read Online. Discuss