یہودیت میں انبیا

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
مضامین بسلسلہ
یہودیت
Star of David.svg
Lukhot Habrit.svg  Menora.svg

باب یہودیت

یہودی مفسر راشی، مگیلہ 14-الف (Megillah 14a) اور اس کے تحشیہ کے مطابق 48 انبیا اور 7 نبیہ گزریں ہیں۔[1]

یہودیت میں آخری نبی ملاکی کو تسلیم کیا جاتا ہے۔ اور ان کی وفات کے بعد نبوت کا معتبر دور ختم ہو گیا تھا۔[2]

48 انبیا[ترمیم]

  1. ابراہیم
  2. اسحاق
  3. یعقوب
  4. موسیٰ
  5. ہارون
  6. یشوع
  7. فینحاس
  8. القانہ
  9. عیلی
  10. سموئیل
  11. جاد
  12. ناتن
  13. داؤد
  14. سلیمان
  15. عدو
  16. میکایاہ
  17. عبدیاہ
  18. اخیاہ
  19. یاہو
  20. عزریاہ
  21. یحزی ایل لاوی
  22. الیعزر بن دوداواہو
  23. ہوسیع
  24. عاموس
  25. میکاہ
  26. آموص
  27. ایلیاہ
  28. الیشع
  29. یوناہ
  30. یسعیاہ
  31. یوایل
  32. ناحوم
  33. حبقوق
  34. صفنیاہ
  35. اوریاہ
  36. یرمیاہ
  37. حزقی ایل
  38. سمعیاہ
  39. باروک
  40. نیریاہ
  41. سرایاہ
  42. محسیاہ
  43. حجی
  44. زکریاہ
  45. ملاکی
  46. مردکی
  47. عودد
  48. حنانی

سات نبیہ[ترمیم]

  1. سارہ
  2. مریم
  3. دبورہ
  4. حنہ
  5. ابیجیل
  6. خلدہ
  7. آستر

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Nosson Scherman۔ The Stone Edition Tanach۔ Mesorah Publications, Limited۔ صفحہ 2038۔ 
  2. یہ ولنا گاؤن کے مطابق ہے، جو نحمیاہ کی بابل میں 9 طوت 3448 (313 ق م) سے پہلے مرنے کی رائے پر مبنی ہے۔ نحمیاہ فارس کے شہنشاہ ارتخششتا اول کے دور (پانچویں صدی قبل مسیح) میں فارسی یہودیہ کے گونر تھے۔ نحمیاہ کی کتاب ان کے ہیکل دوم کے عہد میں یروشلم کی تعمیر نو کرنے کے کام کو بیان کرتی ہے۔ Gaon، Vilna. Babylonian Talmud. San.11a, Yom.9a/Yuch.1.14/Kuz.3.39,65,67/Yuch.1/Mag.Av.O.C.580.6 

بیرونی روابط[ترمیم]