مرابحہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

زمرہ جات


کوئی چیز خریدی اوراس پرکچھ اخراجات کیے پھرقیمت اور اخراجات کوظاہر کر کے اس پر نفع کی ایک مقدار بڑھا کراس کوفروخت کردینا اسے مرابحہ کہتے ہیں۔ [1]

تعریف[ترمیم]

مرابحہ ، ایک مخصوص قسم کی تجارت ہے ، جو تابع شریعت ہے ۔اس میں ایک فروخت کنندہ اپنا مال بیچنے سے پہلے صاف طورپر یہ کہہ دیتاہے کہ اس نے اس شئے کو کس قیمت پر خریدا تھا اور یہ فروخت کنندہ اس شئے پر اس کو حاصل ہونے والے منافع کا اظہار بھی خریدنے والے پر کر دیتا ہے ۔ا سلامی مالیاتی اداروں کے زیر عمل ایک انتہائی مقبول طریقہ ہے جس کے ذریعہ سود سے پاک رقم لین دین کو فروغ دیا جاتا ہے اس طریقہ کو بالعموم ، اثاثہ جات و جائیداد کے لیے مالیہ کی فراہمی،مائیکروفنانس اور اشیاءکی درآمد و برآمد کے لیے استعمال کیا جاتا ہے ۔ زائد از 100 کھرب ڈالر مالیاتی اشیاء کا مرابحہ بحالت موجودہ خلیج اور دیگر علاقوں میں سب سے زیادہ مقبول اور زیر استعمال اسلامک رقم مارکیٹ پراڈکٹ ہے ۔ [2]


پہلا اسلامی مالیاتی ادراہ[ترمیم]

بحرین میں قائم انٹرنیشنل اسلامک فینانیشل مارکیٹ ( آئی آئی ایف ایم ) نے اسلامی رقمی لین دین (اسلامک فینانس ) میں دنیا کا پہلا تاریخی معاہدہ کردیا ہے اس معاہدہ کو ماسٹر ایگریمنٹ برائے ٹریڑری پلیسمنٹ ( ایم اے ٹی پی ) کا نام دیا گیا ہے


حوالہ جات[ترمیم]

  1. بہار شریعت ،ج2،حصہ 11،ص739
  2. خبر رساں ایجنسی۔اے پی ایس


بیرونی روابط[ترمیم]

عالمی اخبار