تبلیغی جماعت

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
Padlock.svg اس صفحہ کو ترامیم کیلیے نیم محفوظ کر دیا گیا ہے اور صارف کو اندراج کر کے داخل نوشتہ ہونا لازم ہے؛ (اندراج کریں یا کھاتہ بنائیں)
تبلیغی جماعت
Bangalwali Masjid Nizamuddin Markaz India.jpg
بنگلہ والی مسجد (مرکز تبلیغی جماعت)
بانی
مولانا محمد الیاس کاندھلویRAHMAT.PNG
اہم آبادی والے علاقے
 بنگلہ دیش
 بھارت
 پاکستان
 برطانیہ
Flag of Indonesia.svg انڈونیشیا
 ملائشیا
 جنوبی افریقہ
 ریاستہائے متحدہ امریکہ
Flag of Sri Lanka.svg سری لنکا
 فرانس
مذاہب
اسلام
کتابیں
قرآن کریم
زبانیں
مذہبی: عربی
بنگلہ دیش میں: بنگالی
بھارت اور پاکستان میں:اردو
دیگر ممالک میں: برطانیہ میں: علاقائی زبانیں


ملائیشیا میں 2009ء میں تبلیغی اجتماع کا ایک منظر

تحریک دیوبند
Jameah Darul Uloom Deoband.jpg

اہم شخصیات

مولانا محمد قاسم نانوتوی · مولانا رشید احمد گنگوہی
مولانا حسین احمد مدنی ·
مولانا محمود حسن
مولانا شبیر احمد عثمانی ·
مولانا اشرف علی تھانوی
مولانا انور شاہ کشمیری ·
مولانا محمد الیاس کاندھلوی
مولانا عبید اللہ سندھی ·
محمد تقی عثمانی

اہم ادارے

دارالعلوم دیوبند, بھارت
مظاہر علوم سہارنپور, بھارت
دار العلوم معین الاسلام, بنگلہ دیش
دار العلوم ندوۃ العلماء, بھارت
دار العلوم کراچی, پاکستان
جامعہ علوم اسلامیہ, پاکستان
جامعہ دار العلوم زاہدان, ایران
دار العلوم لندن, انگلینڈ
دار العلوم نیویارک, ریاستہائے متحدہ
دار العلوم کیناڈا
مدرسہ انعامیہ, شمالی افریقہ

تحریکیں

تبلیغی جماعت
جمعیت علمائے ہند
جمعیت علمائے اسلام
تحریک ختم نبوت
سپاہ صحابہ
لشکر جھنگوی
طالبان


مولانا محمد الیاس کاندھلویRAHMAT.PNG کی قائم کردہ ایک اسلامی اصلاحی تحریک جو 1926ء میں قائم کی گئی۔ بنیادی طور پر فقہ حنفی کے دیوبندی مکتبۂ فکر سے تعلق رکھتی ہے۔ یہ برصغیر پاک و ہند کے علاوہ ساری دنیا میں سرگرم ہے اس لیے اس کو دعوت و تبلیغ کی عالمی تحریک بھی کہا جاتا ہے۔

تبلیغی جماعت کے اصول

تبلیغی جماعت کے اصول مندرجہ ذیل ہیں:
(انہیں چھ باتیں، چھ صفات اور چھ نمبر بھی کہا جاتا ہے)

  1. ایمان
  2. نماز
  3. علم و ذکر
  4. اکرام مسلم
  5. اخلاص نیت
  6. دعوت و تبلیغ
اور لایعنی امور سے اجتناب۔

جماعت

جماعت اس تحریک کی ایک مخصوص اصطلاح ہے جو اس وقت استعمال کی جاتی ہے جب کئی افراد ایک مخصوص مدّت کے لۓ دین سیکھنے اور سکھانے کی خاطر کسی گروہ کی شکل میں کسی جگہ کا سفر کرتے ہیں ان کے دورے کی مدّت تین دن، چالیس دن، چار ماہ اور ایک سال تک ہو سکتی ہے۔ یہ افراد اس دوران علاقے کی مسجد میں قیام کرتے ہیں۔

گشت

کسی بھی جگہ کے دورے میں اپنے قیام کے دوران یہ افراد گروہ کی شکل میں علاقے کا دورہ کرتے اور عام افراد خصوصاً دوکاندار حضرات کو دین سیکھنے کی دعوت دیتے ہوئے مسجد میں مدعو کیا کرتے ہیں۔ اس عمل کو جماعت کی اصطلاح میں 'گشت' کہا جاتا ہے۔

تعلیم

عموما چاشت کے وقت اور ظہر کی نماز کے بعد مسجد میں تبلیغی جماعت سے وابستہ افراد ایک کونے میں مرتکز ہوجاتے ہیں اور کو‎ئی ایک فرد فضا‎ئل اعمال کا مناسب آواز میں مطالعہ کرتا ہے تاہم اس امر کا خاص خیال رکھا جاتا ہے کہ نماز و تلاوت میں مشغول افراد کے انہماک میں خلل نہ پڑے۔

فضائل اعمال کی تعلیم کا مقصد: اس كتاب کے تعلیم کے مندرجہ ذیل مقاصد ہیں۔ ۱۔ فضائل سن سن کر اعمال کا شوق پیدا ہو جائے۔ ۲۔ علم اور عمل میں جوڑ پیدا ہو جائے۔ ۳۔ مال سے ہٹ کر اعمال پر یقین بن جائے۔ ۴۔ سب کے دل قرآن و حدیث سے اثر لینے والے بن جائیں۔

تعلیم کے فضائل : ايک حدیث کا مفہوم ہے کہ ایک دفعہ نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم مسجد نبوی میں تشریف لائے تو دو حلقے لگے ہوئے تھے ۔ ایک تعلیم کا اور ایک ذکر کا ۔ آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا کہ دونوں خیر کے حلقے ہیں ۔ میں معلم بنا کر بھیجا گیا ہوں ۔ اور یہ فرما کر آپ صلی اللہ علیہ وسلم تعلیم کے حلقے میں تشریف فرما ہو ئے۔ آپ صلی اللہ علیہ وسلم کے اس اقدام نے تعلیم کے حلقے کو تمام حلقو ں پر مقدم کر دیا۔

فضا‎ئل اعمال

دوسری تنظیموں کی طرح تبلیغی جماعت کے ساتھیوں کے لیے قرآن پاک کی تلاوت کے ساتھ ساتھ اعمال کے فضائل سے متعلق ایک کتاب کا مطالعہ کرایا جاتا ہے۔ اس مجموعہ کو بھی کتابی شکل میں مرتب کیا گیا ہے جو فضا‎ئل اعمال کے نام سے موسوم ہے۔ اس کتاب کا مطالعہ جماعتوں میں چلتے ہوئے اور مقامی مسجد میں تسلسل سے کرایا جاتا ہے۔ اور اس كى علاوہ منتخب احادیث مؤلف مولانا محمد يوسف كاندھلوي صاحب كا بھی مطالعہ كيا جاتا ہے۔

سالانہ عالمی اجتماعات

رائے ونڈ اجتماع

عام طور پر اکتوبر کے مہینے میں لاہور کے قریب را‎ئے ونڈ میں تین روزہ سالانہ اجتماع کا انعقاد کیا جاتا ہے جس میں نا صرف پاکستان بلکہ دنیا بھر سے لاکھوں افراد شرکت کرتے ہیں۔ اس موقع پر یہاں ایک عارضی شہر آباد ہو جاتا ہے۔

بنگلہ دیش اجتماع

یہ بھی عام طور پر سال کے آخر میں منعقد ہوتا ہے۔ یہ مختلف شہروں میں کئی دنوں تک جاری رہتا ہے۔ اس اجتماع میں پورا بنگلہ دیش امڈ پڑتا ہے۔ جس کی وجہ سے اس اجتماع کو صرف ڈھاکہ میں انعقاد کے بجائے بنگلہ دیش کے کئی شہروں میں منعقد کیا جاتا ہے۔ کچھ سال قبل یہ صرف ڈھاکہ میں ہی منعقد ہوتا تھا۔

بھوپال اجتماع

یہ بھی سال کے آخر ماہ دسمبر میں منعقد ہوتا ہے جس میں ہند و بیرون ہند سے لاکھوں افراد شرکت کرتے ہیں۔ یہ اجتماع کئی سال قبل بھوپال کی مشہور مسجد تاج المساجد میں منعقد ہوتا تھا لیکن جگہ کے ناکافی ہونے کی بنا پر اسے شہر کے مضافات میں واقع ایٹ کھیڑی نامی جگہ میں منتقل کردیا گیا۔ اب اس اجتماع کا انعقاد تسلسل کے ساتھ اسی جگہ ہوتا ہے۔

مراکز تبلیغی جماعت

بھارت

بنگلہ والی مسجد

پوری دنیا میں بنگلہ والی مسجد تبلیغی جماعت کا اولین مرکز ہے۔ یہ مسجد دہلی میں بستی نظام الدین اولیاء میں واقع ہے۔

پاکستان

رائے ونڈ

پاکستان میں تبلیغی جماعت کا مرکز یہیں واقع ہے۔

مدنی مسجد

کراچی کے علاقے فیڈرل بی ایریا میں واقع مدنی مسجد کراچی میں تبلیغی جماعت کا سب سے بڑا مرکز ہے جہاں ہر جمعرات کو بعد نماز مغرب کراچی کی سطح پر اجتماع ہوتا ہے جس مین اہلسنت کے جید علمائے کرام وعظ کرتے ہیں۔ عوام کی ایک کثیر تعداد اس محفل میں شریک ہوتی ہے۔

مکمل فہرست

دنیا بھر میں پھیلے ہوئے تبلیغی جماعت کے مراکز کی فہرست #بیرونی روابط کے ذیل میں ملاحظہ فرمائیں۔

امارت

تبلیغی جماعت میں کئی دہائیوں تک نظام امارت موجود رہا۔ امیر کو میوات کے افراد حضرت جی کہا کرتے تھے، پھر یہی لقب امیر تبلیغی جماعت کے لیے چل پڑا۔ اس میں تین امراء (حضرت جی) ہوئے ہیں:

  1. مولانا محمد الیاس کاندھلویRAHMAT.PNG
  2. مولانا محمد یوسف کاندھلویRAHMAT.PNG
  3. مولانا انعام الحسن کاندھلویRAHMAT.PNG

شورائی نظام

مولانا انعام الحسن کاندھلویRAHMAT.PNG کی وفات (1995ء) کے بعد بھارت کے نامور علماء کرام نے متفقہ طور پر مولانا زبیر الحسن کاندھلوی کو امیر منتخب کرلیا، لیکن میوات والے مولانا محمد سعد کاندھلوی کی امارت پر اصرار کرتے رہے۔ یہ صورتحال دیکھ کر علماء نے نظام امارت کو تحلیل کرکے شورائی نظام بنایا جس میں بھارت سے مولانا محمد سعد کاندھلوی اور مولانا زبیر الحسن کاندھلوی اور پاکستان سے عبد الوہاب صاحب کو منتخب کیا گیا۔ اس طرح تبلیغی جماعت میں شورائی نظام کی ابتدا ہوئی۔ اس کے بعد سے تبلیغ کے وفود (جماعتوں) میں جو امیر بنائے جاتے ہیں ان کو بھی امیر کے بجائے ذمہ دار کہا جاتا ہے۔

وابستہ نامور شخصیات


بیرونی روابط


سانچہ:اسلامی اوکیہ جوت