ضیاء الدین المقدسی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
المختارۃ ضیاء الدین المقدسی حنبلی[1]
مسلمان عالم دین
المختارۃ ضیاء الدین المقدسی حنبلی[1]
معروفیت ضیاء الدین المقدسی
پیدائش 11 جنوری 1174ء
الدیر المبارکہ، جبل قاسیون، دمشق (موجودہ سوریہ)
وفات 8 نومبر 1245ء (71 سال)
دمشق، بلاد الشام، (موجودہ سوریہ)
دور اسلامی عہدِ زریں
مذہب اسلام
فقہ حنبلی
کارہائے نماياں الاحاديث المختارة او المستخرج من الاحاديث المختارة مما لم يخرجہ البخاری ومسلم فی صحيحيهما

ضیاء الدین المقدسی (پیدائش: 11 جنوری 1174ء— وفات: 8 نومبر 1245ء) فقہ حنبلی کے عالم اور محدث تھےجو دمشق کے رہنے والے تھے ۔

تصانیف[ترمیم]

المختارۃ ضیاء الدین المقدسی کا پورا نام الاحاديث المختارة او المستخرج من الاحاديث المختارة مما لم يخرجہ البخاری ومسلم فی صحيحيهما ( وہ مجموعہ احادیث جس میں وہ احادیث بیان کی گئی ہیں جو بخاری و مسلم میں نہیں) محدثین نے کتاب مختارہ کو مستدرک سے بہتر قرار دیا ہے۔ حافظ ضیاء المقدسی نے ’’ المختارۃ ‘‘ ترتیب دی ہے جس میں انہوں نے صحت کا التزام کیا ہے اور کئی ایسی روایات کو صحیح قرار دیا ہے جو اس سے پہلے صحیح قرار نہیں دی گئیں۔[2]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Tawassul part 2
  2. الاعلام لزرکلی