اسحاق کوسج

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
اسحاق کوسج
معلومات شخصیت
تاریخ پیدائش سنہ 786 اور سنہ 787  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 7 جون 865 (78–79 سال)  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
نیشاپور  ویکی ڈیٹا پر مقام وفات (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مدفن نیشاپور  ویکی ڈیٹا پر مقام دفن (P119) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Black flag.svg دولت عباسیہ  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مذہب اسلام
فرقہ اہل سنت
فقہی مسلک حنبلی
عملی زندگی
پیشہ محدث  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
P islam.svg باب اسلام

ابو یعقوب اسحاق بن منصور بن بہرام مروزی کوسج نسبت سے مشہور ہوئے، حنبلی فقیہ تھے، حدیث کے مشہور راوی ہیں، سنہ 170 ہجری کے بعد پیدا ہوئے ہیں۔

شیوخ[ترمیم]

سفیان بن عیینہ، وکیع بن جراح، نضر بن شمیل، یحییٰ بن سعید قطان، معاذ بن ہشام، ابو اسامہ، عبد الرحمن بن مہدی، عبد اللہ بن نمیر، محمد بن بکر برسانی، عبد الرزاق، محمد بن یوسف فریابی، عفان اور دوسرے محدثین سے استفادہ کیا۔

حالات زندگی[ترمیم]

ابو عبد اللہ حاکم فرماتے ہیں: «ابو یعقوب کوسج مرو میں پیدا ہوئے، نیساپور میں پروان چڑھے اور وہیں وفات پائی، وہ اصحاب حدیث کے زاہد اور کتاب و سنت پر مضبوطی سے عمل کرنے والے علما میں سے تھے، سب سے زیاد رجوع و اعتماد صحیحین پر تھا، امام احمد بن حنبل کے خصوصاََ ان مسائل پر پورا ادراک تھا جن پر اہل بدعت مذاق اڑایا کرتے تھے»۔ مسلم بن حجاج کہتے ہیں: «وہ (اسحاق کوسج) ثقہ اور مامون شخص تھے»۔ امام نسائی فرماتے ہیں: «ثقہ تھے»۔ علامہ ذہبی فرماتے ہیں: «بسا اوقات امام بخاری ان (اسحاق کوسج) سے روایت کرتے تو صرف فرماتے اسحاق نام لیتے، نسب کا ذکر نہ کرتے، جس سے ابن راہویہ کا بھی اشتباہ ہوتا، ہمارے پاس بہت سے قرائن ہیں جس سے کسی ایک مراد کو ترجیح دی جائے، لیکن کوئی حرج کی بات نہیں ہے، چونکہ اسحاق کوسج اور اسحاق بن راہویہ دونوں حجت ہیں»۔[1]

وفات[ترمیم]

حسین بن محمد قبانی فرماتے ہیں کہ: "اسحاق بن منصور بن بہرام ابو یعقوب کوسج کی وفات جمعرات کے روز نیشاپور میں ہوئی اور وہیں جمعہ کے روز 10 جمادی الاولی سنہ 251 ہجری میں تدفین ہوئی۔"[2]

حوالہ جات[ترمیم]