شفا بنت عبد اللہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

شفاء بنت عبداللہ لکھنے پڑھنے اورجھاڑ پھونک میں شہرت رکھتی تھیں۔

نام و نسب[ترمیم]

شفاء نام، قبیلہ قریش کے خاندان عدی سے ہیں۔ سلسلۂ نسب یہ ہے: شفاء بنت عبداللہ بن عبد شمس بن خلف بن صد۔ّاد بن عبداللہ بن ۔ُقرط بن رزاح بن عدی بن کعب بن لؤی۔ والدہ کا نام فاطمہ بنت ابی وہب بن عمرو بن عائد بن عمر بن مخزوم تھا۔

اسلام[ترمیم]

ہجرت سے قبل مسلمان ہوئیں۔

نکاح[ترمیم]

ابو حثمہ بن حذیفہ عدوی سے نکاح ہوا۔

حالات زندگی[ترمیم]

آنحضرتﷺ سے ان کو بہت محبت تھی، آپ کبھی ان کے گھر تشریف لے جاتے تو آرام فرماتے تھے، انہوں نے آپ کے لیے علاحدہ بچھونا اور ایک تہبند رکھ چھوڑی تھی چونکہ ان میں آنحضرتﷺ کا پسینہ جذب ہوتا تھا یہ بڑی متبرک چیزیں تھیں۔ شفاءکے بعد ان کی اولاد نے ان تبرکات کو نہایت احتیاط سے محفوظ رکھا لیکن مروان نے ان سے یہ سب چیزیں لے لیں۔

  • آنحضرتﷺ نے ان کو ایک مکان بھی عنایت فرمایا تھا اور وہ اپنے بیٹے کے ساتھ اسی میں سکونت پزیر تھیں۔
  • عمر فاروق نےنے اپنے زمانۂ خلافت میں ان کے ساتھ خاص رعایتیں کیں۔ چنانچہ اصابہ میں ہے:
  • کَانَ عُمَرُ یُقَدِّ مُھَا فِیْ الرَّأیِ وَیَرْعَاھَا وَیُفَضِّلُھَا وَرُبَّمَا وَلَّاھَا شَیْئًا مِنْ اَمْرِ السُّوْقِ۔
  • ’’عمرفاروق ان کو رائے میں مقدم رکھتے ان کی فضیلت کی رعایت کرتے اور ان کو بازار کا اہتمام سپرد کرتے تھے۔‘‘

اولاد[ترمیم]

اولاد میں دو کا پتہ چلتا ہے، سلیمان اور ایک لڑکی جو شرحبیل بن حسنہ کو منسوب تھی۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. سیر الصحابیات، مؤلف ، مولانا سعید انصاری 112،مشتاق بک کارنر لاہور