آدم جی حاجی داؤد

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
آدم جی حاجی داؤد
آدم جی حاجی داؤد

معلومات شخصیت
پیدائش 30 جون 1880  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
جیتپور، گجرات، برطانوی ہند  ویکی ڈیٹا پر مقام پیدائش (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 27 جنوری 1948 (68 سال)  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
کراچی، پاکستان  ویکی ڈیٹا پر مقام وفات (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت British Raj Red Ensign.svg برطانوی ہند
Flag of Pakistan.svg پاکستان  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اولاد عبد الواحد آدم جی  ویکی ڈیٹا پر اولاد (P40) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ صنعت کار، انسان دوست، سیاست دان  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

سر آدم جی حاجی داؤد (انگریزی: Adamjee Haji Dawood) (پیدائش: 30 جون، 1880ء - وفات: 26 جنوری، 1948ء) ہندوستان کے مشہور و معروف تاجر، صنعت کار، مخیر شخصیت اور تحریک پاکستان کے اکابرین میں شامل تھے۔ وہ پٹ سن کی صنعت کے بادشاہ کہلاتے تھے۔ مسلم کمرشل بینک اور آدم جی انشورنس کمپنی کے بانی تھے۔

حالات زندگی[ترمیم]

سر آدم جی حاجی داؤد 30 جون، 1880ء کو جیت پور، گجرات (موجودہ بھارت) میں پیدا ہوئے تھے۔ خاندانی ماحول کی وجہ سے ابتدا ہی سے تجارت کی طرف راغب ہوئے اور غیر منقسم ہندوستان کے بڑے تاجروں میں شمار ہوئے۔ انہوں نے قائد اعظم محمد علی جناح کی ہدایت پر روزنامہ ڈان کی نئی دہلی سے اشاعت میں ہاتھ بٹایا اور کل ہند مسلم ایوانِ تجارت کی تنظیم قائم کی۔ وہ پٹ سن کی صنعت کے بے تاج بادشاہ کہلاتے تھے اور آدم جی انشورنس اور مسلم کمرشل بینک کے بانی تھے۔ تقسیم ہند کے بعد انہوں نے اس نوزائیدہ مملکت پاکستان کی اقتصادی بنیادیں استوار کرنے میں اہم کردار ادا کیا۔[1]

وفات[ترمیم]

سر آدم جی حاجی داؤد 26 جنوری، 1948ء کو کراچی، پاکستان میں کر گئے۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ ا ب پاکستان کرونیکل: عقیل عباس جعفری، ورثہ / فضلی سنز، کراچی، 2010ء، ص 13