بہار (بھارت)

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
بہار
Bihar
ریاست
Official seal of بہار
مہر
بہار ، بهارت میں واقع ہے
بہار ، بهارت میں واقع ہے
متناسقات (پٹنہ): 25°22′N 85°08′E / 25.37°N 85.13°E / 25.37; 85.13متناسقات: 25°22′N 85°08′E / 25.37°N 85.13°E / 25.37; 85.13
ملک Flag of India.svg بھارت
خطے انگکا ، بهوجپور ، مگدھ ،متهلا
انقسامات پٹنہ ، Tirhut, Saran, Darbhanga, Kosi, Purnia, Bhagalpur, Munger, Magadh
قائم شدہ 1912 (بہار)
نام پر Vihara  Change value named after (P138) in Wikidata
دار الحکومت پٹنہ
عظیم ترین شہر پٹنہ ، بهاگل پور ، گیا ، مظفر پور ، پورنیہ
اضلاع 38 total
حکومت
 • ادارہ حکومت بہار، حکومت ہند
 • Governor D. Y. Patil
 • وزیرِ اعلیٰ نتیش کمار (جے ڈی یو)
 • Legislature دو ایوانیت (243 + 75 نشستیں)
 • Parliamentary constituency 40
 • عدالتِ عالیہ پٹنہ عدالت عالیہ
رقبہ
 • کل 94,163 کلو میٹر2 (36,357 مربع میل)
درجہ بلحاظ رقبہ 12th
آبادی (2011)[1]
 • کل 103,804,637
 • درجہ بلحاظ آبادی 3rd
منطقۂ وقت بهارتی معیاری وقت (یو ٹی سی+05:30)
UN/LOCODE INBR
جیوکوڈ 1275715[2]  Change value GeoNames ID (P1566) in Wikidata
آیزو 3166 رمز IN-BR
گاڑی رجسٹریشن BR
انسانی ترقیاتی اشاریہ Increase2.svg 0.41[3] (کم)
HDI rank 21st (2011)
خواندگی 63.82% (28th)
73.4% (مذکر)
53.3% (مونث)
دفتری زبان اردو اور ہندی
ویب سائٹ gov.bih.nic.in

بہار بھارت کی ایک ریاست ہے جس کا دارالحکومت اور سب سے بڑا شہر پٹنہ ہے۔ بہار کے شمال میں نیپال ہے تین جانب بھارت کی دیگر ریاستیں قائم ہیں جن میں مغرب کی جانب اتر پردیش، جنوب میں جھاڑ کھنڈ اور مشرق میں مغربی بنگال ہے۔

ریاست بہار دریائے گنگا کے زرخیز میدانوں پر پھیلی ہوئی ہے۔ یہ بھارت کے پہلے صدر راجندرا پرساد اور مولانا مظہر الحق کی جائے پیدائش ہے۔

تاریخ[ترمیم]

مزید دیکھیں بہار کے اضلاع بہار کے شہر

آبادیات[ترمیم]

2001ء کے مطابق ریاست کی آبادی 82،878،796 ہے اور فی مربع کلومیٹر 880 افراد بستے ہیں۔

جغرافیہ[ترمیم]

بہار 94،164 مربع کلومیٹر پر پھیلا ہوا ہے جس میں 37 اضلاع ہیں۔

بہار میں اردو ادب[ترمیم]

  1. "census of india". Census of India 2001. حکومت ہند. 27 مئی 2002. وثق شدہ اصل جمع شدہ3 April 2007 کو. اخذ کردہ بتاریخ 14 اپریل 2007. 
  2. سے درآمد: GeoNames — اجازت نامہ: CC BY 3.0 Unported
  3. http://www.firstpost.com/india/hdi-in-india-rises-by-21-kerala-leads-gujarat-far-behind-114044.html