ہندکو

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
ہندکو
Hindko
Panjistani
ہندکو
Hindko.svg
ہندکو شاہ مکھی میں
مقامی  پاکستان
علاقہ ضلع پشاور، ضلع کوہاٹ، ہزارہ، خیبر پختونخوا، سطح مرتفع پوٹھوہار، پنجاب، پاکستان، آزاد کشمیر
مقامی متکلمین
3.7 ملین (2016)[1]
لہجے
شاہ مکھی
زبان رموز
آیزو 639-3 کوئی ایک:
hnd – جنوبی ہندکو
hno – شمالی ہندکو
گلوٹولاگ hind1271[2]

ہندکو یا ہندکو زبان، اسے بعض ماہرین ہندکو لہجہ قرار دیتے ہیں۔ جو زبانوں کے ہند آریائی خاندان کے ذیلی زمرے لاندھا میں شامل ہے۔ اس زبان کو بولنے والے ہندکوان کہلاتے ہیں۔ یہ زبان پاکستان، شمالی ہندوستان اور افغانستان کے ہندکی علاقوں میں بولی اور سمجھی جاتی ہے۔ لفظ ہندکو کا لفظی مطلب ہند کے پہاڑوں کا ہے، یہ نام فارس کے علاقوں میں تمام ہمالیہ کے سلسلے کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔ فارسی زبان کے تحت لفظ ہند کا مطلب دریائے سندھ سے متعلق علاقوں اور کو سے مراد پہاڑ لی جاتی ہے۔ ہندکو کو اسی تناسب سے ہندوستان کی زبان سے موسوم کیا جاتا ہے۔ ہندکو کی اصطلاح قدیم یونانی علمی حلقوں میں بھی پائی جاتی رہی ہے، جس سے مراد حالیہ شمالی پاکستان اور مشرقی افغانستان کے پہاڑی سلسلے لیے جاتے ہیں۔ یہ زبان پاکستان میں خیبر پختونخوا کے ایبٹ آباد،مانسہرہ،ہری پور،بٹگرام، پشاور، کوہاٹ، جبکہ صوبہ پنجاب کے علاقوں اٹک اور پوٹھوہار اور آزاد کشمیر کے بیشتر علاقوں جیسے پونچھ،باغ،مظفر آباد،وغیرہ میں بولی جاتی ہے۔ ایک اندازے کے مطابق چالیس لاکھ لوگ اس زبان کو بول اور سمجھ سکتے ہیں۔ اس زبان کو بولنے والوں کا کوئی بھی خاص حوالہ نہیں ہے۔ یہ مختلف قومیتوں اور علاقوں سے تعلق رکھتے ہیں اور عام طور پر انتہائی بڑے قبیلوں میں بٹے ہوئے ہیں۔ لیکن ہزارہ ڈویژن کے علاقوں ہری پور، ایبٹ آباد اور مانسہرہ میں انھیں ہزارے وال ہزارہ ڈویژن کی نسبت سے پکارا جاتا ہے۔ پشاور شہر میں اس زبان کو بولنے والوں کو پشاوری یا خارے کے نام سے پکارا جاتا ہے جس کا مطلب پشاور شہر کے آبائی ہندکوان لیا جاتا ہے۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. سانچہ:E20, citing the 2014 World Factbook.
  2. Nordhoff، Sebastian; Hammarström، Harald; Forkel، Robert et al۔، eds. (2013)۔ "HindkoGlottolog۔ Leipzig: Max Planck Institute for Evolutionary Anthropology۔ http://glottolog.org/resource/languoid/id/hind1271۔