ابوبکر بن علی الصنھاجی البیذق

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ابوبکر بن علی الصنھاجی البیذق
معلومات شخصیت
عملی زندگی
پیشہ آپ بیتی نگار،  مؤرخ  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

محمد ابو بکر ابن علی الصنھاجی البیذق (وفات:1164ء کے بعد) مراکش کے ایک مورخ تھے جو بنیادی طور پر محمد بن تومرت کے ساتھی اور دولت موحدین کے واقعہ نگار تھے۔ البیذق ان کا عرفی نام تھا کیونکہ وہ قد میں چھوٹے تھے۔ ابو بکر صنھاجی قبیلے سے تعلّق رکھتے تھے۔[1][2]

البیذق کا مرکزی کام کا عنوان "المکتباس من کتابی ال عنصاب فی ماریفاطی الاشب" (تحریری: 1150ء)۔[3] یہ کتاب اس دور کا سب سے اہم ذریعہ ہے۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Akhbar al-Mahdī Ibn Tumart wa-bidayat dawlat al-Muwahhidīn (or. text in Arabic) ed. Al-Riba, 1971
  2. Ed. in Algeria as: Kitāb Akhbār al-Mahdī ibn Tūmart (Algiers: al-Mu’assasa al-Waṭaniyya li-l-Kitāb, 1982)
  3. Al-Baydhaq (Abû Bakr ibn 'Alî al-Sinhâdjî), Histoire des Almohades, texte et traduction É. Lévi-Provençal, « Documents inédits d'histoire almohade », Paris, Geuthner, 1928, includes Kitab al-Muwahiddin, i.e. the chronicles of the Almohads, letters and sermons by Ibn Tumart and Abd al-Mumin and Ibn Tumart's biography from the first person perspective of al-Baydhaq.