ابو عبد اللہ قضاعی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ابو عبد اللہ قضاعی
معلومات شخصیت
تاریخ پیدائش 10ویں صدی  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
تاریخ وفات 1062
عملی زندگی
پیشہ مؤرخ  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
P islam.svg باب اسلام

ابو عبد اللہ محمد بن سلامہ بن جعفر بن علی قضاعی مصری شافعی مصر کے قاضی تھے اور مشہور کتاب مسند شہاب کے مصنف ہیں۔

اساتذہ[ترمیم]

  • ابو مسلم محمد بن احمد کاتب
  • احمد بن ثرثال
  • ابو الحسن بن جہضم
  • احمد بن عمر جیزی
  • ابو محمد بن نحاس مالکی اور دیگر۔

تلامذہ[ترمیم]

  • ابو نصر بن ماکولا
  • ابو عبد اللہ حمیدی
  • ابو سعد عبد الجلیل ساوی
  • سہل بن بشر اسفرایینی
  • ابو القاسم نسیب
  • ابو عبد اللہ محمد بن احمد رازی اور دیگر طالبین علم نے استفادہ کیا۔

علما کی آرا[ترمیم]

  • ابن ماکولا کہتے ہیں: «وہ کئی علوم میں ماہر تھے، میں نے مصر میں ان کے مقام کا کوئی دوسرا نہیں دیکھا»۔
  • غیث ارمنازی کہتے ہیں: «مصر میں قاضی کے منصب پر فائز تھے، ان کی کئی تصنیفات ہیں»۔
  • سلفی کہتے ہیں: «ثقہ اور قوی حافظہ والے تھے، شافعی المذہب تھے»[1]

تصنیفات[ترمیم]

تصنیفات کے چند نام یہ ہیں:[2]:

  • النجوم المتقدہ (محمد صلی اللہ علیہ وسلم کے اقوال کا مجموعہ ہے۔
  • دستور معالم الحکم (علی بن ابی طالب کے اقوال کا مجموعہ ہے)
  • تاریخ القضاعی (انبیا کرام سے لیکر خلفاء راشدین تک اور خلیفہ ظاہر تک کی تاریخ)
  • مناقب الشافعی (ناپید ہے)
  • خلاصۃ وافیۃ للمعلمین (حدیث کے مصادر کی فہرست تھی جو اب ناپید ہے)
  • منشآت مصر (مصر کی تاریخ تھی تو ناپید ہے)

تفسیر القرآن

  • درۃ الواعظین و ذخر العابدین

دقائق الأخبار و حدائق الاعتبار

وفات[ترمیم]

حبال کہتے ہیں: مصر میں ذو الحجہ سنہ 454 ہجری میں وفات پائی۔[3]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. سير أعلام النبلاء: القضاعي المكتبة الإسلامية. وصل لهذا المسار في 4 نوفمبر 2015 آرکائیو شدہ 2017-07-21 بذریعہ وے بیک مشین
  2. Qutbuddin 2013, p. 15-16.
  3. وفاة القاضي أبي عبد الله القضاعيقصة الإسلام. وصل لهذا المسار في 4 نوفمبر 2015 آرکائیو شدہ [Date missing] بذریعہ islamstory.com [Error: unknown archive URL]