ابوبکر کلاباذی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ابوبکر کلاباذی
معلومات شخصیت
پیدائش صدی 10  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
بخارا  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
وفات سنہ 990 (39–40 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
بخارا  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام وفات (P20) ویکی ڈیٹا پر
شہریت Black flag.svg دولت عباسیہ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
مذہب اسلام
فرقہ سنی صوفی
فقہی مسلک حنفی
والد اسحاق  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں والد (P22) ویکی ڈیٹا پر
عملی زندگی
پیشہ متصوف،  فلسفی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر
پیشہ ورانہ زبان عربی،  فارسی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں زبانیں (P1412) ویکی ڈیٹا پر
شعبۂ عمل تصوف  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شعبۂ عمل (P101) ویکی ڈیٹا پر
P islam.svg باب اسلام

محمد بن اسحاق بخاری کلاباذی اپنے وقت کے امام اصول و فروع تھے،

نام[ترمیم]

تاج الاسلام ابو بکر محمد بن اسحاق ابراہیم بن یعقوب کلا باذی بخاری ان کی کنیت ابو بکر تھی۔فقہ شیخ محمد بن فضل سے پڑھی اور ایک کتاب التعرف على مذهب أهل التصوف نام تصنیف فرمائی جس میں توحید کے معاملہ میں اصحاب حنفیہ کے اقوال کو جمع کیا۔
محدث فقہیہ اور صوفی تھے۔ کلاباذی بخارا کا ایک محلہ ہے آپ کی کتاب ’’تعرف لمذہب اہل تصوف‘‘ کا انگریزی ترجمہ پروفیسر آربری نے 1935ھ میں شائع کیا اور اردو ترجمہ ایک محققانہ مقدمے کے ساتھ ڈاکٹر پیر محمد حسن نے 1391ھ میں لاہور میں شائع کیا۔ان کی دوسری کتاب ’’بحر الفوائد فی معانی الاخبار‘‘ ہے385ھ میں بخارا مین وفات پائی[1] اس کے علاوہ ’’اربعون حدیث‘‘ ’’اور الشفاع والا رتاد‘‘ بھی آپ کی تصانیف ہیں [2]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. اردو انسائیکلوپیڈیا آف اسلام
  2. حدائق الحنفیہ