ابوحنیفہ دینوری

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
ابوحنیفہ دینوری
(عربی میں: أبو حنيفة الدِينَوَرِيخاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقامی زبان میں نام (P1559) ویکی ڈیٹا پر
معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 828  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
دینور  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
تاریخ وفات سنہ 895 (66–67 سال)[1]  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
شہریت Flag of Iran.svg ایران  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
عملی زندگی
پیشہ ماہر فلکیات،جغرافیہ دان،ریاضی دان،مؤرخ،منجم،ماہر حیاتیات  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر
تصنیفی زبان عربی[2]  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں بولی، لکھی اور دستخط کی گئیں زبانیں (P1412) ویکی ڈیٹا پر
شعبۂ عمل جغرافیہ،نباتیات،علم زبان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شعبۂ عمل (P101) ویکی ڈیٹا پر
P islam.svg باب اسلام

احمد بن داود الدینوری الحنفی تیسری صدی ہجری میں عراق میں پیدا ہوئے، بہت سارے ملکوں کی سیاحت کی اور کوئی 281 ہجری کو وفات پائی، ان کی تصانیف میں ہم تک صرف “کتاب النبات” پہنچی ہے، اس کتاب کا بھی پانچواں حصہ استنبول لائبریری میں دریافت ہوا اور 333 صفحات میں شائع کیا گیا، اس کتاب کا ایک مخطوط نسخہ سعودی عرب کے شہر مدینہ منورہ کی ایک لائبریری میں بھی موجود ہے.

کتابیں[ترمیم]

  • کتاب تفسیرالقران
  • کتاب الانواء (انواء = نوء کی جمع ہے اور مغرب میں ستارہ ٹوٹنے کے معنا میں ہے)
  • کتاب اصلاح المنطق
  • امامت و سیاست
  • کتاب لحن العامه
  • کتاب الفصحا
  • کتاب حساب الدور والوصایا
  • کتاب الزیج
  • کتاب النبات (دو جلد)
  • کتاب الجبر و المقابلہ
  • کتاب جواہرالعلم
  • کتاب الرد علی رصد الاصبہانی
  • کتاب الشعر و الشعراء
  • کتاب التاریخ
  • کتاب اخبار الطوال (شاید وہی کتاب التاریخ ہے)
  • کتاب فی حساب الخطائین
  • کتاب البلدان
  • کتاب القبلة و الزوال
  • کتاب البحث فی حساب الہند
  • کتاب الجمع و التفریق
  • کتاب نوادر الجبر
  • کتاب الاکراد

حوالہ جات[ترمیم]

  1. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb11351734b — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  2. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb11351734b — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ