آبادیات بھارت

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
آبادیات بھارت
India population density map en.svg
بھارت میں انسانی آبادی کی کثافت
آبادی: 1,236,344,631 (July 2014 تخمینہ)[1] (فہرست ممالک بلحاظ آبادی)
کثافت: 383 لوگ/فی کلومیٹر (2011ء تخمینہ)
شرح اضافہ: Increase 1.25% (2013) (فہرست ممالک بلحاظ شرح اضافہ آبادی)
شرح پیدائش: 20.22 پیدائش/1,000 آبادی (2013ء تخمینہ)
شرح اموات: 7.4 اموات/1,000 آبادی (2013ء تخمینہ)
متوقع زندگی: 68.89 سال (2009ء تخمینہ)
–مرد: 67.46 سال (2009ء تخمینہ)
–عورت: 72.61 سال (2009ء تخمینہ)
شرح بار آوری: 2.3 بچے کی پیدائش/خواتین (SRS 2013ء)
شرح کمسن اموات: 40 اموات/1,000 پیدائش (2013ء تخمینہ)
عمر ساخت
0-14 سال: 31.2% (مرد 190,075,426/خواتین 172,799,553) (2009ء تخمینہ)
15-64 سال: 63.6% (مرد 381,446,079/خواتین 359,802,209) (2009ء تخمینہ)
65-زیادہ: 5.3% (مرد 29,364,920/خواتین 32,591,030) (2009ء تخمینہ)
جنسی تناسب
بوقت پیدائش: 1.10 مرد/خواتین (2013ء تخمینہ)
15 سے کم: 1.10 مرد/خواتین (2009ء تخمینہ)
15-64 سال: 1.06 مرد/خواتین (2009ء تخمینہ)
65-زیادہ: 0.90 مرد/خواتین (2009ء تخمینہ)
شہریت
بڑے نسلیاتی گروہ: دیکھیے بھارت میں نسلی گروہ
زبان
سرکاری: دیکھیے :بھارت کی زبانیں

بھارت جنوبی ایشیاء کا ایک ملک ہے۔ موجودہ بھارت 1947ء کو معرض وجود میں آیا۔ بھارت اس وقت آبادی کے لحاظ سے دنیا کا دوسرا بڑا ملک ہے۔ اگر دنیا کی آبادی کو چھ حصوں میں تقسیم کیا جائے تو ان چھ حصوں میں سے ایک حصہ آبادی بھارت کی ہے۔ بھارت میں کُل دنیا کے 17.5 فیصد لوگ آباد ہیں۔ آبادی کی مختلف شماریات اور تناسبات کو دیکھ کر ماہرین کا کہنا ہے کہ 2025ء تک بھارت دنیا کا پہلا سب سے بڑا ملک بن جائے گا اور اس کی آبادی چین سے زیادہ ہو جائے گی۔[2]

بھارت کی 50 فیصد سے زیادہ آبادی نوجوانوں پر مشتمل ہے یعنی جن کی عمر 25 سال سے کم ہے۔ بھارت میں 1 سال سے 35 سال تک عمر والے افراد پورے بھارت کی 65 فیصد آبادی ہے۔ بھارت میں 1000 سے زائد نسلی گروہ ہیں جو ہزار سے زائد زبانیں بولتے ہیں۔ دنیا کے سارے ادیان بھارت میں پائے جاتے ہیں جن میں ہندومت اور اسلام کے پیروکار سب سے زیادہ ہے۔ دنیا کے چاروں بڑے خاندانہائے زبان (دراوڑی زبانیں، ہند-یورپی زبانیں،جنوبی ایشیائی زبانیں،چینی۔تبتی زبانیں) بھارت میں موجود ہیں۔

تاریخ[ترمیم]

اندازے کے مطابق تقریباََ 300 قبل مسیح میں قدیم بھارت کی آبادی 100 سے 140 ملین کے درمیان تھی۔ ایک اور اندازے کے مطابق 1600ء میں بھارت کی آبادی 100 ملین تھی۔ 1881ء میں جب پہلی مرتبہ مردم شماری کرائی گئی تو اس وقت ہندوستان کی آبادی 255 ملین تھی۔

1881ء میں بھارتی مردم شماری کے دوران مردم شماری میں بہت سے اہم زمرہ جات شامل کیے گئے جیسے کُل آبادی، پیدائش و اموات، جغرافیائی پھیلاؤ، شرح تعلیم، شہری اور دیہاتی آبادی وغیرہ، لہذا اب جب رائے شماری کرائی جاتی ہے تو ان زمرہ جات کو بھی ضرور شامل کیا جاتا ہے تاکہ ملک کے ہر شعبے اور ہر پہلؤوں کو جانچا جاسکے۔ 1881ء کی مردم شماری میں بھارت کے تین ایسے شہر تھے جن کی آبادی اس وقت 8 ملین سے زیادہ تھی، یہ تین شہر بمبئی، دہلی اور کلکتہ تھے۔

خصوصیات[ترمیم]

بھارت اگرچہ دنیا کے 2 فیصد زمین پر محیط ہے لیکن بھارت کی آبادی دنیا کی ساڑھے 17 فیصد آبادی بنتی ہے۔ 2001ء کی مردم شماری کے مطابق بھارت کی 72 فیصد آبادی (638,000) دیہاتوں میں جبکہ بقیہ 28 فیصد (5,100) قصبات میں آباد تھی۔[3]

بھارت کے آبادیات کا موازنہ[ترمیم]

زمرہ عالمی درجہ تبصرہ (حوالہ جات)
رقبہ ساتواں [4]
آبادی دوسرا [4]
آبادی بڑھنے کا تناسب 212 میں سے ایک سو دوسرا درجہ 2010 میں[5]
کثافت آبادی
(ایک کلومیٹر زمین میں آباد لوگ)
212 میں سے چوبیسواں 2010 میں [5]
مرد بہ خواتین کی پیدائش کا تناسب 214 میں سے بارہواں 2009 میں[6]

تاریخِ آبادی[ترمیم]

شمار سال مردم شماری آبادی[7] % تبدیلی [7]
1 1951 361,088,000 ----
2 1961 439,235,000 21.6
3 1971 548,160,000 24.8
4 1981 683,329,000 24.7
5 1991 846,387,888 23.9
6 2001 1,028,737,436 21.5
7 2011 1,210,726,932 17.7

بلحاظ ریاست[ترمیم]

آبادیاتِ بھارت بلحاظ ریاست
شمار بھارت کی ریاستیں اور عملداریاں قسم آبادی %[8] علاقہ (کلومیٹر²)[9] کثافت( کلومیڑ²) مرد خواتین جنسی تناسب[10] شرح تعلیم دیہی آبادی[11] شہری آبادی[11]
1 اتر پردیش ریاست 199,812,341 16.50 240,928 828 104,480,510 95,331,831 912 67.68 131,658,339 34,539,582
2 مہاراشٹر ریاست 121,455,333 9.28 307,713 365 58,243,056 54,131,277 929 82.34 55,777,647 41,100,980
3 بہار (بھارت) ریاست 103,804,637 8.60 94,163 1,102 54,278,157 49,821,295 918 61.80 74,316,709 8,681,800
4 مغربی بنگال ریاست 91,276,115 7.54 88,752 1,030 46,809,027 44,467,088 950 76.26 57,748,946 22,427,251
5 مدھیہ پردیش ریاست 72,626,809 6.00 308,245 236 37,612,306 35,014,503 931 69.32 44,380,878 15,967,145
6 تامل ناڈو ریاست 72,147,030 5.96 130,058 555 36,137,975 36,009,055 996 80.09 34,921,681 27,483,998
7 راجستھان ریاست 68,548,437 5.66 342,239 201 35,550,997 32,997,440 928 66.11 43,292,813 13,214,375
8 کرناٹک ریاست 61,095,297 5.05 191,791 319 30,966,657 30,128,640 973 75.36 34,889,033 17,961,529
9 گجرات (بھارت) ریاست 60,439,692 4.99 196,024 308 31,491,260 28,948,432 919 78.03 31,740,767 18,930,250
10 آندھرا پردیش ریاست 49,386,799 4.08 160,200 308 24,738,068 24,648,731 996 67.41 34,776,389 14,610,410
11 اڑیسہ ریاست 41,974,218 3.47 155,707 269 21,212,136 20,762,082 979 72.87 31,287,422 5,517,238
12 تلنگانہ ریاست 35,193,978 2.9 114,845 308 42,442,146 42,138,631 990 66.83 20,624,678 6,198,530
13 کیرلا ریاست 33,406,061 2.76 38,863 859 16,027,412 17,378,649 1084 95.50 23,574,449 8,266,925
14 جھارکھنڈ ریاست 32,988,134 2.72 79,714 414 16,930,315 16,057,819 948 66.41 20,952,088 5,993,741
15 آسام ریاست 31,205,576 2.58 78,438 397 15,939,443 15,266,133 958 72.19 23,216,288 3,439,240
16 پنجاب (بھارت) ریاست 27,743,338 2.29 50,362 550 14,639,465 13,103,873 895 75.84 16,096,488 8,262,511
17 چھتیس گڑھ ریاست 25,545,198 2.11 135,191 189 12,832,895 12,712,303 991 70.28 16,648,056 4,185,747
18 ہریانہ ریاست 25,351,462 2.09 44,212 573 13,494,734 11,856,728 879 75.55 15,029,260 6,115,304
19 دہلی عمل داری 16,787,941 1.39 1484 11297 8,987,326 7,800,615 868 86.21 944,727 12,905,780
20 جموں و کشمیر ریاست 12,541,302 1.04 222,236 56 6,640,662 5,900,640 889 67.16 7,627,062 2,516,638
21 اتراکھنڈ ریاست 10,086,292 0.83 53,483 189 5,137,773 4,948,519 963 78.82 6,310,275 2,179,074
22 ہماچل پردیش ریاست 6,864,602 0.57 55,673 123 3,481,873 3,382,729 972 82.80 5,482,319 595,581
23 تری پورہ ریاست 3,673,917 0.30 10,486 350 1,874,376 1,799,541 960 94.65 2,653,453 545,750
24 میگھالیہ ریاست 2,966,889 0.25 22,429 132 1,491,832 1,475,057 989 74.43 1,864,711 454,111
25 منی پور ریاست 2,855,794 0.21 22,327 122 1,290,171 1,280,219 992 79.21 1,590,820 575,968
26 ناگالینڈ ریاست 1,978,502 0.16 16,579 119 1,024,649 953,853 931 79.55 1,647,249 342,787
27 گوا ریاست 1,458,545 0.12 3,702 394 739,140 719,405 973 88.70 677,091 670,577
28 اروناچل پردیش ریاست 1,383,727 0.11 83,743 17 713,912 669,815 938 65.38 870,087 227,881
29 پونڈیچری عمل داری 1,247,953 0.10 479 2,598 612,511 635,442 1037 85.85 325,726 648,619
30 میزورم ریاست 1,097,206 0.09 21,081 52 555,339 541,867 976 91.33 447,567 441,006
31 چندی گڑھ عمل داری 1,055,450 0.09 114 9,252 580,663 474,787 818 86.05 92,120 808,515
32 سکم ریاست 610,577 0.05 7,096 86 323,070 287,507 890 81.42 480,981 59,870
33 جزائر انڈمان و نکوبار عمل داری 380,581 0.03 8,249 46 202,871 177,710 876 86.63 239,954 116,198
34 دادرا و نگر حویلی عمل داری 343,709 0.03 491 698 193,760 149,949 774 76.24 170,027 50,463
35 دمن و دیو عمل داری 243,247 0.02 112 2,169 150,301 92,946 618 87.10 100,856 57,348
36 لکشادیپ عمل داری 64,473 0.01 32 2,013 33,123 31,350 946 91.85 33,683 26,967
کُل بھارت 29 + 7 1,210,726,932 100 3,287,240 382 623,724,248 586,469,174 940 74.04 833,087,662 377,105,760

ریاستوں کے اضلاع[ترمیم]

درجہ ریاست/عمل داری تعداد اضلاع
2001 میں
تعداد اضلاع
2014 میں
تعداد اضلاع
کسی بھی جغرافیائی تبدیلی کے بغیر
1 اتر پردیش 45 71 -
2 مدھیہ پردیش 45 51 -
3 بہار (بھارت) 37 40 34
4 مہاراشٹر 35 36 31
5 راجستھان 32 33 18
6 تامل ناڈو 30 32 25
7 کرناٹک 27 30 24
8 اڑیسہ 30 30 26
9 آسام 23 27 15
10 گجرات (بھارت) 25 33 20
11 جھارکھنڈ 18 24 9
12 آندھرا پردیش 23 13 13
13 جموں و کشمیر 14 22 5
14 ہریانہ 19 21 17
15 خطۂ پنجاب 17 22 8
16 مغربی بنگال 18 20 17
17 چھتیس گڑھ 16 27 8
18 کیرلا 14 14 14
19 اروناچل پردیش 13 17 10
20 اتراکھنڈ 13 13 11
21 ہماچل پردیش 12 12 12
22 ناگالینڈ 8 11 3
23 دہلی 9 11 9
24 منی پور 9 9 9
25 میزورم 8 8 4
26 میگھالیہ 7 11 4
27 سکم 4 4 4
28 تری پورہ 4 8 2
29 پونڈیچری 4 4 4
30 جزائر انڈمان و نکوبار 2 3 1
31 گوا 2 2 2
32 دمن و دیو 2 2 2
33 دادرا و نگر حویلی 1 1 1
34 چندی گڑھ 1 1 1
35 لکشادیپ 1 1 1
36 تلنگانہ 0 10 10
کُل بھارت 593 640 464

[12]

مذاہب[ترمیم]

2011 مردم شماری کے معلومات[14]
تشکیل ہندوs[15] مسلمانs[16] مسیحیت[17] سکھs[18] بدھ مت[19] جین متs[20] دیگر 1[21]
کُل آبادی میں فیصد 79.80% 14.23% 2.30% 1.72% 0.70% 0.37% 0.89%
10-year growth % (est. 2001-2011)[22] 16.8% 24.6% 15.5% 8.4% 6.1% 5.4% 103.1%
تعداد خواتین بہ 1000 مرد (اوسط= 943) 939 951 1023 903 965 954 995
شرح تعلیم (65% تعلیم حاصل کرنے والے 7 سال سے بڑے ہیں)[23] 64.5% 60.0% 80.3% 70.4% 73.0% 95.0% 50.0%
شرح ملازمت/نوکری 40.4 31.3 39.7 37.7 40.6 32.9 48.4
دیہی جنسی تناسب[22] 923 953 1001 895 958 937 995
شہری جنسی تناسب[22] 922 907 1026 886 944 941 966
شرح اطفال (0–6 سال) 925 950 964 786 942 870 976

مذہب (1951ء تا 2001ء)[ترمیم]

مذہبی
گروہ
آبادی
% 1951
آبادی
% 1961
آبادی
% 1971
آبادی
% 1981
آبادی
% 1991
آبادی
% 2001
آبادی
% 2011[24]
ہندو مت 84.1% 83.45% 82.73% 82.30% 81.53% 80.46% 79.80%
اسلام 9.8% 10.69% 11.21% 11.75% 12.61% 13.43% 14.23%
مسیحیت 2.3% 2.44% 2.60% 2.44% 2.32% 2.34% 2.30%
سکھ مت 1.79% 1.79% 1.89% 1.92% 1.94% 1.87% 1.72%
بدھ مت 0.74% 0.74% 0.70% 0.70% 0.77% 0.77% 0.70%
جین مت 0.46% 0.46% 0.48% 0.47% 0.40% 0.41% 0.37%
زرتشتی 0.13% 0.09% 0.09% 0.09% 0.08% 0.06% n/a
دیگر مذاہب / بے دین 0.43% 0.43% 0.41% 0.42% 0.44% 0.72% 0.9%

آبادی بلحاظ عمر[ترمیم]

شرح تعلیم[ترمیم]

زبانیں[ترمیم]

بھارتی زبانیں بلحاظ آبادی متکلمین آبادیات بھارت[25]
درجہ زبان متکلمین فیصد
1 ہندوستانی کی بولیاں [26] 422,048,642 41.03%
2 بنگلہ 83,369,769 8.11%
3 تیلگو 74,002,856 7.19%
4 مراٹھی 71,936,894 6.99%
5 تامل 60,793,814 5.91%
6 اردو 51,536,111 5.01%
7 گجراتی 46,091,617 4.48%
8 کنڑا 37,924,011 3.69%
9 ملیالم 33,066,392 3.21%
10 اڑیہ 33,017,446 3.21%
11 پنجابی 29,102,477 2.83%
12 آسامی 13,168,484 1.28%
13 میٹھیلی 12,179,122 1.18%
14 بھیلی 9,582,957 0.93%
15 سنتالی 6,469,600 0.63%
16 کشمیری 5,527,698 0.54%
17 نیپالی 2,871,749 0.28%
18 گونڈی 2,713,790 0.26%
19 سندھی 2,535,485 0.25%
20 کونکنی 2,489,015 0.24%
21 ڈوگری 2,282,589 0.22%
22 خاندیشی 2,075,258 0.20%
23 کُرُ کھ 1,751,489 0.17%
24 تولو 1,722,768 0.17%
25 منی پوری 1,466,705* 0.14%
26 بوڑو زبان 1,350,478 0.13%
27 خاسی 1,128,575 0.112%
28 مُندری 1,061,352 0.105%
29 ہُو 1,042,724 0.103%

بڑے شہر[ترمیم]


اہم تخمینے[ترمیم]

اقوام متحدہ تخمینہ[ترمیم]

دورانیہ ایک سال میں پیدائشیں ایک سال میں اموات ایک سال میں قدرتی بدلاؤ CBR1 CDR1 NC1 TFR1 IMR1
1950–1955 16,832,000 9,928,000 6,904,000 43.3 25.5 17.7 5.90 165.0
1955–1960 17,981,000 9,686,000 8,295,000 42.1 22.7 19.4 5.90 153.1
1960–1965 19,086,000 9,358,000 9,728,000 40.4 19.8 20.6 5.82 140.1
1965–1970 20,611,000 9,057,000 11,554,000 39.2 17.2 22.0 5.69 128.5
1970–1975 22,022,000 8,821,000 13,201,000 37.5 15.0 22.5 5.26 118.0
1975–1980 24,003,000 8,584,000 15,419,000 36.3 13.0 23.3 4.89 106.4
1980–1985 25,577,000 8,763,000 16,814,000 34.5 11.8 22.7 4.47 95.0
1985–1990 26,935,000 9,073,000 17,862,000 32.5 10.9 21.5 4.11 85.1
1990–1995 27,566,000 9,400,000 18,166,000 30.0 10.2 19.8 3.72 76.4
1995–2000 27,443,000 9,458,000 17,985,000 27.2 9.4 17.8 3.31 68.9
2000–2005 27,158,000 9,545,000 17,614,000 24.8 8.7 16.1 2.96 60.7
2005–2010 27,271,000 9,757,000 17,514,000 23.1 8.3 14.8 2.73 52.9
1 CBR = crude birth rate (per 1000); CDR = crude death rate (per 1000); NC = natural change (per 1000); TFR = total fertility rate (number of children per woman); IMR = infant mortality rate per 1000 births

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "CIA World Factbook - India"۔ 
  2. BBC NEWS | In Depth | India population 'to be biggest'
  3. سینسیس انڈیا
  4. ^ 4.0 4.1 "CIA World Factbook"۔ Central Intelligence Agency, USA۔ اخذ کردہ بتاریخ January 2012۔ 
  5. ^ 5.0 5.1 "World Bank Indicators Databank, by topic"۔ The World Bank۔ اخذ کردہ بتاریخ January 2012۔ 
  6. "Gender Statistics Highlights from 2012 World Development Report"۔ World DataBank, a compilation of databases by the World Bank۔ February 2012۔ 
  7. ^ 7.0 7.1 "Census Population" (PDF)۔ Census of India۔ Ministry of Finance India۔ اخذ کردہ بتاریخ January 1, 2014۔ 
  8. "Ranking of States and Union territories by population size: 1991 and 2001"۔ Government of India (2001)۔ Census of India۔ صفحات 5–6۔ اخذ کردہ بتاریخ 2008-12-12۔ 
  9. "Area of India/state/district"۔ Government of India (2001)۔ Census of India۔ اخذ کردہ بتاریخ 2008-10-27۔ 
  10. "Population"۔ Government of India (2011)۔ Census of India۔ 
  11. ^ 11.0 11.1 "Population"۔ Government of India (2001)۔ Census of India۔ اخذ کردہ بتاریخ 2008-10-26۔ 
  12. "Census of India Website : Office of the Registrar General and Census Commissioner, India"۔ Censusindia.gov.in۔ اخذ کردہ بتاریخ 2011-09-26۔ 
  13. Office of The Registrar General & Census Commissioner, India, New Delhi-110011 2011، صفحہ۔ 1.
  14. "Muslim population growth slows"۔ 
  15. "Tables: Profiles by main religions: Hindus"۔ Census of India: Census Data 2001: India at a glance>> Religious Composition۔ Office of the Registrar General and Census Commissioner, India۔ اخذ کردہ بتاریخ 2008-11-26۔ 
  16. "Tables: Profiles by main religions: Muslims"۔ Census of India: Census Data 2001: India at a glance>> Religious Composition۔ Office of the Registrar General and Census Commissioner, India۔ اخذ کردہ بتاریخ 2008-11-26۔ 
  17. "Tables: Profiles by main religions: Christians"۔ Census of India: Census Data 2001: India at a glance>> Religious Composition۔ Office of the Registrar General and Census Commissioner, India۔ اخذ کردہ بتاریخ 2008-11-26۔ 
  18. "Tables: Profiles by main religions: Sikhs"۔ Census of India 2001: Census Data 2001: India at a glance>> Religious Composition۔ Office of the Registrar General and Census Commissioner, India۔ اخذ کردہ بتاریخ 2008-11-26۔ 
  19. "Tables: Profiles by main religions: Buddhists"۔ Census of India: Census Data 2001: India at a glance>> Religious Composition۔ Office of the Registrar General and Census Commissioner, India۔ اخذ کردہ بتاریخ 2008-11-26۔ 
  20. "Tables: Profiles by main religions: Jains"۔ Census of India: Census Data 2001: India at a glance>> Religious Composition۔ Office of the Registrar General and Census Commissioner, India۔ اخذ کردہ بتاریخ 2008-11-26۔ 
  21. "Tables: Profiles by main religions: Other religions"۔ Census of India: Census Data 2001: India at a glance>> Religious Composition۔ Office of the Registrar General and Census Commissioner, India۔ اخذ کردہ بتاریخ 2008-11-26۔ 
  22. ^ 22.0 22.1 22.2 "Census of India."۔ Census of India. Census Data 2001: India at a glance>> Religious Composition۔ Office of the Registrar General and Census Commissioner, India۔ اخذ کردہ بتاریخ 2008-11-26۔ 
  23. "Government of India" (PDF)۔ اخذ کردہ بتاریخ 2013-06-16۔ 
  24. "Population by religious community - 2011"۔ 2011 Census of India۔ Office of the Registrar General & Census Commissioner۔ اصل سے جمع شدہ 25 August 2015 کو۔ اخذ کردہ بتاریخ 25 August 2015۔  }
  25. Abstract of speakers' strength of languages and mother tongues - 2000, Census of India, 2001
  26. includes مرکزی ہند-آریائی, مرکزی ہند-آریائی, بہاری زبانیں, راجستھانی زبان and Pahari languages.
  27. Weblink


نقص حوالہ: "note" نام کے حوالے کے لیے ٹیگ <ref> ہیں، لیکن مماثل ٹیگ <references group="note"/> نہیں ملا یا پھر بند- ٹیگ </ref> ناموجود ہے