محمد بن عبد اللہ بن جعفر

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
محمد بن عبد اللہ بن جعفر
معلومات شخصیت
مقام پیدائش مدینہ منورہ  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات سنہ 680  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
کربلا  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
والدہ زینب بنت علی  ویکی ڈیٹا پر (P25) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مادری زبان عربی  ویکی ڈیٹا پر (P103) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عسکری خدمات
لڑائیاں اور جنگیں سانحۂ کربلا  ویکی ڈیٹا پر (P607) کی خاصیت میں تبدیلی کریں


محمد بن عبد اللہ بن جعفر ابن ابی طالب (وفات 61 ھ / 680 عیسوی) نے امام حسین کے ساتھ جنگ کربلا میں حصہ لیا اور قتل ہوئے ۔ [1] کچھ ذرائع کے مطابق ، وہ سیدہ زینب کے بیٹا ہیں۔ وہ اور ان کے بھائی عون اپنے والد عبد اللہ بن جعفر حکم سے امام حسین کے ساتھ کربلا آئے کیونکہ ان کے والد علیل تھے اور امام کے ساتھ جانے سے معذور تھے

بعض روایات کے مطابق محمد بن عبد اللہ بن جعفر عبدﷲ بن جعفر اور خوسہ بنت حفصہ بنت ربیعہ کے بیٹے تھے۔ اور عون کے بھائی تھے۔


نسب[ترمیم]

نام: محمد بن عبد الله بن جعفر بن أبي طالب بن عبد المطلب دادا جعفر بن أبي طالب المعروف بالطيار.رئيس المهاجرين جنہوں نے حبشہ ہجرت کی تھی.

آپ والدہ متعلق دو قول ہیں:

بعض روایات میں آپ کی والدہ زينب بنت علي وفاطمةالزهراء لکھا گیا ہے[2]

لیکن کچھ روايات میں آپ کی والدہ الخوصاء بنت حفصة بن ثقيف کو بتایا گیا ہے.[3]

مقتل میں[ترمیم]

آپ اور آپ کے بھائی عون، معركة كربلاء میں قتل ہوئے، 10 دشمنوں کا قتل کرنے کے بعد عامر بن نہشل عامر بن نهشل التميمي کے ہاتھوں شہید ہوئے۔ دوران جنگ آپ نے یہ رجز پڑھا

[4][5][6][7][8]

نشكو إلى الله من العدوان قتال قومٍ في الردى عميان
قد تركوا معـالم القـرآن ومحكم التنـزيل و التبيان وأظهروا الكفر مع الطغيان

زيارته[ترمیم]

زيارة الناحية آپ پر اس طرح سلام بھیجا گیا ہے:

«السَّلَامُ عَلَى مُحَمَّدِ بْنِ عَبْدِ اللَّهِ بْنِ جَعْفَرٍ الشَّاهِدِ مَكانَ أَبِيهِ وَ التَّالِي لِأَخِيهِ وَ وَاقِيهِ بِبَدَنِهِ لَعَنَ اللَّهُ قَاتِلَهُ عَامِرَ بْنَ نَهْشَلٍ التَّمِيمِي».


شہادت[ترمیم]

واقعہ کربلا میں 10 دشمنوں کا قتل کرنے کے بعد عامر بن نہشل کے ہاتھوں شہید ہوئے۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. موسوعة عاشوراء [مردہ ربط] آرکائیو شدہ 2015-09-23 بذریعہ وے بیک مشین
  2. روضة الشهدا، ص303.
  3. تاريخ الطبري، ج5، ص469؛ مقاتل الطالبيين، ص95.
  4. "بحار الأنوار - العلامة المجلسي - ج 45 - الصفحة 34". 14 ستمبر 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 08 ستمبر 2019. 
  5. "العوالم ، الإمام الحسين - الشيخ عبد الله البحراني - الصفحة 277". 25 فروری 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 08 ستمبر 2019. 
  6. "شرح الأخبار - القاضي النعمان المغربي - ج 3 - الصفحة 202". 24 جولا‎ئی 2017 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 08 ستمبر 2019. 
  7. "موسوعة شهادة المعصومين - لجنة الحديث في معهد باقر العلوم - ج 2 - الصفحة 248". 23 جولا‎ئی 2017 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 08 ستمبر 2019. 
  8. "كتاب الفتوح - أحمد بن أعثم الكوفي - ج 5 - الصفحة 111". 25 فروری 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 08 ستمبر 2019.