کنعان بن نوح

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
کنعان بن نوح
معلومات شخصیت
والد حام[1]  ویکی ڈیٹا پر والد (P22) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

نوح کا وہ بیٹا جو ایمان نہ لایا نوح کا بیٹا "یام" جس کا لقب کنعان تھا اور کنعان کی والدہ "وہلہ" گھر والوں میں سے یہ دونوں علٰیحد رہے اور غرق ہوئے۔[2] نوح نے اپنے بیٹے کو کشتی میں سوار ہونے کو کہا لیکن وہ سوار نہ ہوا اور غرق ہو گیا حالانکہ توریت کے سفر مذکور میںنوح کے تین بیٹے لکھے ہیں۔ سام، حام، یافث اور تینوں کا کشتی میں سوار ہونا اور طوفان سے نجات پانا لکھا ہے اور نیز مفسرین اسلام اس بیٹے کا نام کنعان بتلاتے ہیں حالانکہ کنعان حام کا بیٹا نوح کا پوتا ہے۔[3] ایک بیٹا (کنعان یا۔ یام) اور حضرت نوح علیہ السلام کی اہلیہ (وَ عِلَۃ) یہ دونوں کافر تھے، ان کو کشتی میں بیٹھنے والوں سے مستشنٰی کر دیا گیا[4] حضرت نوح علیہ السلام کی ایک بیوی اور آپ کے بیٹے "یام" (کنعان) کے بارے میں تھا‘ جو اسی بیوی سے تھا‘ جبکہ آپ کے تین بیٹے حام، سام اور یافث ایمان لا چکے تھے اور آپ کے ساتھ کشتی میں سوار ہوئے تھے۔ حضرت سام اور ان کی اولاد بعد میں اسی علاقے میں آباد ہوئی تھی۔ چنانچہ قوم عاد‘ قوم ثمود اور حضرت ابراہیم علیہ السلام سب سامئ النسل تھے۔ حام اور یافث دوسرے علاقوں میں جا کر آباد ہوئے اور اپنے اپنے علاقوں میں ان کی نسل بھی آگے چلی۔[5]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. فصل: 10 — باب: 6
  2. تفسیر عثمانی مفسر مولانا شبیر احمد عثمانی،ہود،40
  3. تفسیر حقانی ابو محمد عبد الحق حقانی،ہود 25
  4. تفسیر مکہ مفسر مولانا صلاح الدین یوسف،ہود 40
  5. تفسیر بیان القرآن ڈاکٹر اسرار احمد، سورہ یوسف،40