خمیسو خان

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
استاد خمیسو خان
معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1923  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
ٹنڈو محمد خان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
تاریخ وفات 8 مارچ 1983 (59–60 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
قومیت Flag of پاکستانپاکستانی
عملی زندگی
پیشہ فن کار  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر
صنف لوک موسیقی
اعزازات
صدارتی تمغا برائے حسن کارکردگی
شاہ لطیف ایوارڈ

استاد خمیسو خان (پیدائش: 1923ء — وفات: 8 مارچ 1983ء) پاکستان سے تعلق رکھنے والے نامور الغوزہ نواز تھے۔

حالات زندگی[ترمیم]

خمیسو خان 1923ء کو گوٹھ گاجاموری،ٹنڈو محمد خان ضلع حیدرآباد، برطانوی ہندوستان (موجودہ پاکستان) میں پیدا ہوئے۔ وہ کتابی تعلیم تو حاصل نہیں کرسکے مگر انہوں نے اپنے زمانے کے مشہور الغوزہ نواز استاد سید احمد شاہ سے الغوزہ بجانے کی باقاعدہ تعلیم حاصل کی تھی جس کا مظاہرہ وہ شادی کی محفلوں اور مختلف عوامی مراکز پر کرتے رہتے تھے۔ جلد ہی انہیں ریڈیو پاکستان اور پاکستان ٹیلی وژن پر بھی اپنے فن کے اظہار کا موقع ملنے لگا جس کے باعث انہیں عالم گیر شہرت حاصل ہوئی۔[1]

خمیسو خان کی الغوزہ نوازی میں ایک عجیب طرح کا سوز تھا۔ وہ مختلف راگ راگنیوں پر عبور رکھتے تھے۔ انہیں نہ صرف ملک بھر میں بلکہ افریقا، چین، امریکا، روس اور کئی دیگر ممالک میں بھی الغوزہ نوازی کا موقع ملا۔[1]

اعزازات[ترمیم]

حکومت پاکستان نے ان کے فن کے اعتراف میں انہیں 23 مارچ، 14 اگست، 1979ء کو صدارتی تمغا برائے حسن کارکردگی اور حکومت سندھ نے شاہ لطیف ایوارڈ عطا کیا۔[1]

وفات[ترمیم]

خمیسو خان 8 مارچ، 1983ء کو وفات پاگئے۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ ا ب پ ت ص 540، پاکستان کرونیکل، عقیل عباس جعفری، ورثہ / فضلی سنز، کراچی، 2010ء