سریہ علقمہ بن مجزز مدلجی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

-

سلسلہ سرایا نبوی
مقام
محل وقوع
نتیجہ
متحارب
مسلمان

ربیع الاخر 9 ہجری میں حبشہ کی جانب سریہ علقمہ بن مجزز المدلجی بھیجا گیا اطلاع ملی کہ الحبشہ کے لوگ ہیں جنہیں اہل جدہ نے دیکھا رسول اللہ ﷺ نے علقمہ بن مجزز کو تین سو سواروں کے ہمراہ بھیجا جب وہ ہوں پہنچے تو سمندر چڑھ گیا یہ لوگ بھاگ کر ایک جزیرے پہ پہنچ گئےجب سمندر اتر گیا تو کافی دن گذرنے سے کچھ لوگ اپنے اہل و عیال کی طرف جانے کیلئے بیتاب ہو گئے عبد اللہ بن حذافہ السہمی کو ان گھروں میں جانے والوں پر امیر بنایا گیا [1]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. طبقات ابن سعد حصہ اول صفحہ 375محمد بن سعد نفیس اکیڈمی کراچی