یزید بن زمعہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

یزید بن زمعہرسول اللہ ﷺ کے صحابی اور ہجرت حبشہ و مدینہ میں شریک تھے۔

نام ونسب[ترمیم]

یزید نام، والد کا نام زمعہ تھا، نسب نامہ یہ ہے ،یزید بن زمعہ بن اسود بن مطلب ابن اسد بن عبدالعزیٰ قریشی اسدی، ماں کا نام قریبہ تھا، نانہالی شجرہ یہ ہے،قریبہ بنت ابی امیہ بن مغیرہ بن عبداللہ بن عمر بن مخزوم ،قریبہ ام المومنین ام سلمہ کی بہن تھیں،یزید کا خاندان زمانۂ جاہلیت سے مشورہ کے عہدۂ جلیل کا حامل چلاآتا تھا، اورظہور اسلام کے وقت یہ اس پر فائز تھے۔[1]

اسلام وہجرت[ترمیم]

دعوتِ اسلام کے ابتدائی زمانہ میں مشرف باسلام ہوئےاور ہجرت ثانیہ میں حبشہ گئے۔[2]

غزوات وشہادت[ترمیم]

مدینہ آنے کے بعد آنحضرتﷺ کے ساتھ برابر جہاد میں شریک ہوتے رہے،غزوۂ طائف میں بھی آپ کے ساتھ تھے،اتفاق سے میدان جنگ میں ان کا گھوڑا بھڑک کر بھاگا،انہوں نے پکڑ کر شہید کردیا، کوئی اولاد نہ تھی۔[3]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. اصابہ:6/340
  2. ابن سعد،جلد4،ق1:89
  3. استیعاب:2/626،