معمر بن حارث

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

معمر بن حارث غزوہ بدر میں شریک صحابی تھے۔ دار ارقم سے پہلے اسلام لائے ۔

نام ونسب[ترمیم]

معمرنام،والد کا نام حارث تھا،سلسلۂ نسب یہ ہے،معمربن حارث بن معمر ابن حبیب بن وہب بن حذافہ بن جمح،ماں کا نام قتیلہ بن مظعون تھا، حاطب بن حارث حطاب بن حارث کے بھائی اور عثمان بن مظعون کے بھانجے ہیں۔

اسلام وہجرت[ترمیم]

آنحضرتﷺ کے ارقم کے گھر میں تشریف لانے کے قبل مشرف باسلام ہوئے اورہجرت کے زمانہ میں مکہ سے مدینہ گئے،آنحضرتﷺ نے ان میں اور معاذ بن عفراء میں مواخاۃ کرادی۔

غزوات[ترمیم]

مدینہ آنے کے بعد غزوہ بدر، غزوہ احد وغزوہ خندق وغیرہ تمام غزوات میں آنحضرتﷺ کے ساتھ تھے۔

وفات[ترمیم]

خلافت فاروقی میں وفات ہوئی۔[1][2][3]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. الاصابہ فی تمیز الصحابہ جلد 6صفحہ 88مؤلف: حافظ ابن حجر عسقلانی ،ناشر: مکتبہ رحمانیہ لاہور
  2. اصحاب بدر،صفحہ 200،قاضی محمد سلیمان منصور پوری، مکتبہ اسلامیہ اردو بازار لاہور
  3. اسد الغابہ جلد 3 صفحہ 232حصہ ہشتم مؤلف: ابو الحسن عز الدين ابن الاثير ،ناشر: المیزان ناشران و تاجران کتب لاہور