طفاوی دوسی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

طُفاوی دَوسیصحابی رسول اور اصحاب صفہ میں شمار ہوتے ہیں علامہ ابونعیم اصبہانی فرماتے ہیں کہ طفاوی کے شاگرد ابونضرہ نے انہیں صفہ کے طالب علموں میں شمار کیا ہے ۔ طفاوی فرماتے ہیں : میں مدینہ منورہ آیا اور ابوہریرہ کے پاس ایک ماہ تک قیام کیا، اس دوران میں سخت بخار میں مبتلا ہو گیا۔ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم مسجدِنبوی میں تشریف لائے اور فرمایا: دوسی غلام کہاں ہے ؟

جواب میں کچھ لوگوں نے عرض کیا وہ مسجد کے گوشہ میں سخت بخار میں تپ رہے ہیں یہ سن کر محسنِ انسانیت صلی اللہ علیہ وسلم ان کے پاس تشریف لے گئے اور انہیں بہت اطمینان دلایا ۔[1]۔

  1. حلیۃ الأولیاء: 1/ 375