معتب بن عوف

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
معتب بن عوف
معلومات شخصیت

معتب بن عوف غزوہ بدر میں شریک مہاجرصحابی تھے۔ انہیں معتب بن حمراء الخزاعی بھی کہا جاتا ہے حمراء ان کا والدہ کا نام تھا[1]۔

  • پورا نام معتب بن عوف بن عامر بن الفضل بن عفيف بن کلیب بن حبشیہ بن سلول بن کعب بن عمر و الخزاعی السلولی ہے ، انہیں عيهامةبھی کہا جاتا ہے- یہ بنو مخزوم کے حلیف تھے مدینہ اورحبشہ کی طرف دوسری ہجرت کی تھی[2]ان کی کنیت ابو عوف الخزاعی57ھ میں وفات ہوئی[3]

(اور یہ وہ آدمی ہے جسے عیہامہ بن کلیب بن سلول بن کعب از بنو خزاعہ کہا جاتا ہے) بنو مخزوم بن نقط و معتب بن عوف بن عامر سے تھے جو بنو خزاعہ سے ان کے حلیف تھے، ان کی کوئی اولاد نہ تھی۔ انہوں نے رسول اکرم رسولِ اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کے ساتھ مدینے کو ہجرت کی۔ حضور صلی اللہ علیہ وسلم نے ان میں اور ثعلبہ بن حاطب الانصاری کے درمیان مواخات قائم کردی تھی۔ انہوں نے 57ھ میں وفات پائی۔ [4]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. تبصير المنتبہ بتحرير المشتبہ
  2. البداية والنهاية ابن کثیر
  3. تاريخ الإسلام ووفيات المشاهير والأعلام
  4. اسد الغابہ و طبقات ابن سعد