اوس بن صامت

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

اوس بن صامتغزوہ بدر میں شامل انصار صحابی ہیں۔ یہ عبادہ بن صامت کے بھائی ہیں۔

نام ونسب[ترمیم]

اوس بن صامت بن قیس بن اصرم بن فہر بن قیس بن ثعلبہ بن غنم (قوقل) بن سالم بن عوف بن عمرو بن عوف بن خزرج ،والدہ کا نام قرۃ العین تھا، جو عبادہ بن نضلہ بن مالک بن عجلان کی بیٹی تھیں، قرۃ العین کے جگر گوشہ کا نام اپنے نانا کے نام پر رکھا گیا۔ ۔

اسلام[ترمیم]

مدینہ منورہ میں اسلام قبول کیا۔ سب سے پہلے شخص جنہوں نے ظہار کیا تھا ان کے نکاح میں انکی چچا کی بیٹی خویلہ بنت مالک تھیں۔

غزوات[ترمیم]

غزوہ بدر غزوہ احد اور دوسرے غزوات میں میں شریک ہوئے۔

وفات[ترمیم]

خلافت عثمان 34ھ میں رملہ(فلسطین) میں وفات پائی اس وقت عمر 85 سال تھی [1][2][3]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. اسد الغابہ جلد 1 صفحہ 230حصہ اول مؤلف: ابو الحسن عز الدين ابن الاثير ،ناشر: المیزان ناشران و تاجران کتب لاہور
  2. اصحاب بدر،صفحہ 133،قاضی محمد سلیمان منصور پوری، مکتبہ اسلامیہ اردو بازار لاہور
  3. الاصابہ فی تمیز الصحابہ،ابن حجر عسقلانی،جلد 1، صفحہ196،مکتبہ رحمانیہ لاہور۔