ابو سفیان بن حارث بن قیس

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ابو سفیان بن حارث بن قیس
معلومات شخصیت

ابو سفیان بن حارث بن قیس الانصاری شہدائے غزوہ احد میں شامل صحابی ہیں۔

نام و نسب[ترمیم]

ابوسفیان بن حارث بن قیس بن زید بن ضبیعہ بن زید بن مالک بن عوف انصاری اوسی،ایک روایت میں ہے کہ غزوہ ٔاحد میں شہیدہوئے،اورایک میں غزوہ ٔخیبرکاذکر ہے۔

ابوجعفرنےباسنادہ یونس سے انہوں نے ابن اسحاق سے،انہوں نے عمران بن سعد بن سہیل بن حنیف سے،انہوں نے بنوعمروبن عوف کے ایک آدمی سے روایت کی،کہ جب حضورِاکرم غزوۂ احد کو روانہ ہوئے تو آپ کے ساتھ ابوسفیان اورایک صحابی بھی تھے،ان صاحب نے دعاکی،اے اللہ!تو مجھے اس غزوہ میں شہادت نصیب فرما،اورمجھے میرے اہل و عیال کی طرف واپس نہ کر،ابوسفیان نے دعاکی،اے اللہ!تومجھے میرے اہل و عیال کی طرف واپس کرنا،تاکہ میں ان کی کفالت کروں،حضور کے ساتھ مل کر جہادکروں،اوران کی صحبت سے مستفیض ہوں،لڑائی میں ابوسفیان شہید ہو گئے اور دوسرے صحابی بچ کر آگئے،صحابہ نے حضورِاکرم صلی اللہ علیہ وسلم سے اس کا ذکرکیا،توآپ نے فرمایا،کہ ابوسفیان کی نیت زیادہ مبنی بر اخلاص تھی،ابن اسحاق نے تذکرۂ غزوۂ احد کے سلسلے میں اسی طرح بیان کیاہے،اورپھران کاذکران لوگوں میں بھی کیا ہے،جوغزوۂ خیبر میں شہیدہوئے تھے،۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. اسد الغابہ جلد3صفحہ 534 حصہ دہم مؤلف: ابو الحسن عز الدين ابن الاثير ،ناشر: المیزان ناشران و تاجران کتب لاہور