حصین بن الحارث

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

حصین بن الحارثغزوہ بدر میں شریک صحابی ہیں۔

نام ونسب[ترمیم]

حصین نام،والد کانام حارث،نسب نامہ یہ ہے، حصین بن حارث بن مطلب ابن عبد مناف قرشی مطلبی،ماں کا نام سحیلہ تھا، یہ ثقفی قبیلہ سے تھیں۔

اسلام وہجرت[ترمیم]

غزوہ بدر کے قبل مشرف باسلام ہوئے اور ہجرت کرکے مدینہ گئے،آنحضرتﷺ نے ان میں اور رافع بن عنجدة میں مواخاۃ کرادی۔[1]

غزوات[ترمیم]

مدینہ آنے کے بعد تمام غزوات میں آنحضرتﷺ کے ہمرکاب رہے غزوہ بدر،غزوہ احد اورغزوہ خندق وغیرہ کوئی غزوۂ نہ چھوٹا۔ غزوہ بدر میں ان کے دو بھائی طفیل بن الحارث اور عبیدہ بن الحارث بھی شریک تھے۔

وفات[ترمیم]

اپنے بھائی طفیل بن حارث کے چار ماہ بعد 32ھ میں وفات پائی۔[2]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ابن سعد،جلد3،ق1:35
  2. : تاريخ الإسلام ووفيات المشاہير والاعلام۔ تأليف: شمس الدين محمد بن احمد بن عثمان الذہبی۔ دار النشر: دار الكتاب العربی لبنان/ بيروت۔